site
stats
اے آر وائی خصوصی

گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں جگہ بنانے والا پہلا پاکستانی

کیاا ٓپ جانتے ہیں کہ حال ہی میں انتقال کرنے والے مایہ ناز پاکستانی بلے باز لٹل ماسٹر محمد حنیف گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں جگہ بنانے والے پہلے پاکستانی ہیں۔

گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ کے 1955 میں شائع ہونے والے پہلے ایڈیشن میں پاکستانی لیجنڈ کرکٹر کانام سست ترین سنچری اسکورکرنے والے بلےباز کے طور پر کیا گیا ہے۔

گنیز بک کے مطابق حنیف محمد نے 55- 1954میں بہاول پور کے مقام پر بھارت کے خلاف ٹیسٹ میچ کھیلتے ہوئے جو اسکور (142 رنز)کیا تھا، اس میں ابتدائی سو رنز 7 گھنٹے 48 منٹ میں مکمل ہوئے تھے ۔ یہ اس وقت دنیا کی سست ترین ٹیسٹ سنچری کا عالمی ریکارڈ تھا ۔

g 1

گنیز بک کی پوسٹ میں مزید بتایا گیا ہے کہ دنیا کی سست ترین ڈبل سنچری انگلش بلے باز ایس جی بارنی نے 1946-47 میں سڈنی میں آسٹریلیا کے خلاف ہونے والے ٹیسٹ میچ میں 10 گھنٹے 42 منٹ میں اسکور کی تھی جبکہ میچ میں ان کا مجموعی اسکور 234 رنز تھا۔

یہ انکشاف معروف محقق عقیل عباس جعفری نے اپنی فیس بک وال پر کیا ہے ، ساتھ ہی ساتھ انہوں نے گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ کی نادرو نایاب تصاویر بھی پیش کی ہیں۔

book

واضح رہے 81 سالہ حنیف محمد نے اپنے کیریئر کا 18 اکتوبر 1952 کو بھارت کے خلاف دہلی میں میچ کھیل کر کیا جب کے اپنا آخری میچ اکتوبر 1969 میں نیوزی لینڈ کے خلاف کراچی میں کھیلا۔

ٹیسٹ میچز میں تین ہزار سے زائد جبکہ فرسٹ کلاس میں میں 17 ہزار زائد رن بنانے والے حنیف محمد ٹیسٹ میچ میں ٹرپل سینچری جب کہ فرسٹ کلاس میچ میں 499 رنز بنانے اعزاز رکھتے ہیں۔

معروف کرکٹرحنیف محمد انتقال کر گئے*

یاد رہے کہ معروف کرکٹر حنیف محمد11 اگست 2016 کو کراچی میں انتقال کر گئے تھے، وہ طویل عرصے سے کینسر کے موذی مرض میں مبتلا تاور گزشتہ 12 روز سے نجی اسپتال میں زیرِ علاج تھے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top