The news is by your side.

Advertisement

جھولے پر بیٹھی خوفناک اور پراسرار گڑیا، اصل کہانی کیا ہے ؟

آسٹریلیا میں ایک پراسرار گڑیا نے مقامی لوگوں کو خوف میں مبتلا کردیا، لوگوں کا خیال ہےکہ یہ گڑیا بدقسمتی کی علامت ہے اور جو اس کے قریب جاتا ہے وہ اس پر حملہ آور ہوجاتی ہے۔

آسٹریلیا کی ریاست کوئس لینڈ کے قصبے لوسنڈا میں کے ایک جنگل میں جھولے پر بیٹھی ایک گڑیا کوف کی علامت بنی ہوئی ہے، جس کے بارے میں وہاں کے مقامی افراد کا ماننا ہے کہ یہ گڑیا ان کیلئے برائی اور مصیبت لانے کا برا سبب ہے۔

ساحل کے کنارے مینگروز کے جنگل میں ایک جھولے پر پراسرار انداز میں بیٹھی اس گڑیا سے متعلق بہت سی کہانیاں جنم لے چکی ہیں، مقامی لوگ اس وہم اور خوف میں اس حد تک مبتلا ہیں کہ انہیں مکمل یقین ہے کہ جب وہ اسے دیکھتے ہیں تو ان کے ساتھ کوئی نہ کوئی برا واقعہ پیش ٓتا ہے۔

Residents of the North Queensland town Lucinda, 90 minutes north of Townsville and with a population of 406 people, said they believe she brings bad luck

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ساحل پر مچھلیوں کا شکار کرنے والے ماہی گیروں کا ماننا ہے کہ جھولے پر بیٹھی یہ گڑیا ہمارے لیے برائی لانے کا بڑا سبب ہے کیونکہ جب کوئی اسے دیکھ لیتا ہے تو اس کے ساتھ کوئی نہ کوئی حادثہ ہوجاتا ہے کبھی اس کی کشتی خراب ہوجاتی ہے تو کبھی کسی بڑے نقصان کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

ہینچن بروک کے رکن پارلیمنٹ نک ڈامیٹو نے میڈیا کو بتایا کہ علاقے کا ہر شخص گڑیا کے بارے میں جانتا ہے لیکن انجانے خوف کے باعث کوئی بھی واقعتاً اس کے بارے میں بات نہیں کرنا چاہتا، میکنوں کا کہنا ہے کہ جو اس کے قریب جاتا ہے وہ اس پر حملہ آور ہوجاتی ہے ۔

They claimed the doll (pictured) might be to blame for spooky incidents like boat motor troubles and lost fishing gear

انہوں نے کہا کہ یہ کوئی نہیں جانتا ہے کہ یہ پراسرار گڑیا کہاں سے آئی ہے یا اسے کس نے اور کب کس طرح اس گھنے جنگل میں درخت کے نیچے  جھولے پر بٹھا دیا تاہم علاقے کے مکین جو ساحلی پٹی پر ماہی گیری کرتے ہیں کسی بھی مصیبت سے بچنے کیلئے اس سے بہت محتاط رہتے ہیں۔

نک ڈامیٹو نے کہا کہ میں نے وہاں کے لوگوں سے اس گڑیا سے متعلق کئی کہانیاں سنی ہیں جو کشتی چلانے یا مچھلی پکڑنے کے دوران گڑیا کی بدقسمتی کے سبب ان کے ساتھ پیش آئیں لیکن ان کی ہر بات سے کئی سوالات جنم لیتے ہیں جس کے جوابات کوئی نہیں جانتا۔

تاہم نک ڈیمیٹو نے خبردار کیا کہ اس پراسرار گڑیا کی اصلیت ایک معمہ بن چکی ہے اور اس کی کھوج لگانے والے زیادہ تر لوگ اس کی حقیقت جاننےکرنے کے لئے ‘اپنی کوششوں میں لگے ہوئے ہیں۔

 

Comments

یہ بھی پڑھیں