عمران خان ہتک عزت کیس، سماعت 22 نومبر تک ملتوی imran khan
The news is by your side.

Advertisement

عمران خان کے خلاف ہتک عزت کیس، سماعت 22 نومبر تک ملتوی

لاہور: سیشن عدالت نے وزیر اعلٰی شہباز شریف کی جانب سے عمران خان کے خلاف ہتک عزت کیس کی سماعت 22 نومبر تک ملتوی کرتے ہوئے وکلا کو بحث کے لیے طلب کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق آج لاہور کی سیشن عدالت میں جج عبدالغفار نے وزیر اعلٰی پنجاب شہباز شریف کی جانب سے عمران خان کے خلاف ہتک عزت کیس کی سماعت کی جہاں عمران خان کے وکلاء کی استدعا پر سماعت کو ملتوی کرتے ہوئے وکلاء کو بحث کے لیے 22 نومبر کو طلب کرلیا ہے۔

دورانِ سماعت تحریک انصاف کے وکلاء نے موقف اختیار کیا کہ ڈاکٹر بابر اعوان لاہور میں موجود نہیں ہیں چنانچہ وہ آج کی سماعت کے لیے دستیاب نہیں ہیں اس لیے معزز عدالت سے بحث کے لیے مہلت دیئے جانے کی استدعا کی جاتی ہے۔

سیشن عدالت نے پی ٹی آئی کے وکلاء کی استدعا کو منظور کرتے ہوئے کیس کی سماعت 22 نومبر تک ملتوی کر دی اور فریقین کو مقررہ تاریخ پر حاضری کی یقینی بنانے کی ہدایت کی۔

خیال رہے شہباز شریف کی جانب سے دائر دعوے میں مؤقف اختیار کیا گیا تھا کہ عمران خان نے پانامہ پیپرز کے معاملے پر دس ارب روپے کی پیشکش کا بے بنیاد الزام عائد کیا اور قوم کو گمراہ کیا ہے۔

درخواست میں مزید کہا گیا تھا کہ عمران خان نے سیاسی مفادات حاصل کرنے کے لئے شہباز شریف کی کردار کشی کی ہے جس کی وجہ سے نہ صرف ان کی ساکھ متاثر ہوئی بلکہ انھیں اور ان کے خاندان کو شدید ذہنی اذیت کا سامنا کرنا پڑا۔

درخواست میں استدعا کی گئی کہ غلط بیانی کر کے شہرت کو نقصان پہنچانے پر یاتو عمران خان معافی مانگیں یا پھر عدالت عمران خان کے خلاف دس ارب روپے ہرجانے کی ڈگری جاری کرے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں