The news is by your side.

Advertisement

کراچی، اسپتالوں کی انتظامیہ نے رجسٹریشن اور لائسنس کے لیے کوششیں تیز کردیں

کراچی: دارالصحت اسپتال انتظامیہ کی غفلت کے سبب 9 ماہ کی بچی نشوہ کی ہلاکت کے بعد اسپتالوں کی انتظامیہ نے رجسٹریشن اور لائسنس کے لیے کوششیں تیز کردیں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں اسپتال انتظامیہ نے نشوہ کیس کے بعد رجسٹریشن اور لائسنس کے لیے بھاگ ڈور شروع کردی ہے، ڈاکٹر رتھ فاؤ سول اسپتال کراچی کو عبوری لائسنس مل گیا۔

ذرائع کے مطابق ہیلتھ کیئر کمیشن نے اسپتال کا تفصیلی دورہ کرکے عبوری لائسنس جاری کیا۔

ایم ایس ڈاکٹر رتھ فاؤ سول اسپتال کا کہنا تھا کہ سرکاری و نجی اسپتالوں میں غفلت کے واقعات میں اضافہ ہونے لگا ہے، کلائسنس جاری ہونے پر خوشی ہوئی ہے۔

ایم ایس ڈاکٹر خادم قریشی کا کہنا تھا کہ عملے کی جانب سے غفلت برداشت نہیں کی جائے گی، چھ ماہ کے بعد مستقل لائسنس مل جائے گا۔

مزید پڑھیں: عصمت کیس، مجرمانہ غفلت برداشت نہیں کریں گے: وزیر اعلیٰ سندھ

واضح رہے کہ عصمت کیس میں وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا تھا کہ عصمت کیس میں مجرمانہ غفلت برداشت نہیں کی جائے گی، جن ڈاکٹرز کے خلاف فیملی کو شک ہے اس کے خلاف کارروائی ہوگی۔

یاد رہے کہ کراچی کے دارالصحت اسپتال میں نو ماہ کی بچی نشوہ اسپتال انتظامیہ کی جانب سے غلط انجکشن لگنے کے سبب دو روز قبل انتقال کرگئی تھی۔

خیال رہے کہ کورنگی کے سندھ گورنمنٹ اسپتال میں 25 سالہ عصمت کو دانت کے درد لیے انجکشن لگوانے جانے پر مبینہ طور پر زیادتی کے بعد قتل کردیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں