The news is by your side.

بیوی کو قتل کرنے والے لالچی شوہر کو 30 سال قید کی سزا

انقرہ : لالچی اور سفاک شوہر نے انشورنس کی رقم ہتھیانے کیلئے حاملہ بیوی کو پہاڑ سے دھکا دیا تھا جسے آج عدالت نے کڑی سزا سنادی۔

غیرملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق ترکی میں سفاک شوہر نے 25ہزار ڈالر کی بیمہ پالیسی کے لیے اپنی حاملہ بیوی کو پہاڑ سے دھکا دے کر مار ڈالا تھا۔

یہ واقعہ چار سال قبل پیش آیا، ملزم نے پاؤں پھسلنے سے گرنے کا ڈرامہ رچایا تاہم جب پولیس نے روایتی انداز میں تفتیش کی تو اعتراف جرم کرلیا جس کے بعد ملزم کو گرفتار کرلیا گیا۔

خبر کے مطابق جون 2018 میں سفاک اور لالچی شوہر نے ایک ہزار فٹ کی بلندی پر پہاڑ کی چوٹی پر کھڑے ہوکر اپنی حاملہ بیوی سمرا ایسل کے ساتھ مسکراتے ہوئے ایک سیلفی لی اور اچانک اہلیہ کو دھکا دے کر نیچے پھنیک دیا۔

بے رحم شوہر ہاکان ایسل نے غمزدہ ہونے کی اداکاری کرتے ہوئے وہاں موجود سیاحوں کو بتایا کہ اس کی بیوی کا اچانک پاؤں پھسل گیا تھا، تاہم کچھ عرصے بعد ملزم نے انشورنس کمپنی سے بیوی کی ہلاکت پر 25 ہزار امریکی ڈالر کی خطیر رقم کا کلیم جمع کرایا۔

دوارن تفتیش پولیس کو مقتولہ سمرا کے اہل خانہ نے بتایا کہ وہ اونچائی سے خوف زدہ ہوتی تھی اور زندگی میں کبھی ایسی جگہ نہیں گئی تھی جہاں اونچائی ہو، ہمیں اندازہ نہیں کہ اس کا شوہر اس حالت میں جب کہ وہ حاملہ تھی اتنی بلندی پر کیوں لے کرگیا۔

مقتولہ کے اہل خانہ کے اس بیان کے بعد پولیس کو شک گزرا اور یہ شک انشورنش کی رقم کے کلیم پر مزید گہرا ہوگیا۔

پولیس نے تحقیقات کا آغاز کیا اور شوہر کو حراست میں لے لیا گیا جس نے پہلے تو جرم سے انکار کیا لیکن جیسے جیسے شواہد سامنے آتے گئے اس کے پاس اپنا گناہ قبول کرنے کے علاوہ کوئی راستہ نہ بچا۔

عدالت نے شواہد اور گواہوں کی روشنی میں حاملہ بیوی کو 304 میٹر چٹان سے نیچے پھینک کر قتل کرنے کے جرم میں سفاک شوہر کو 30 سال قید کی سزا سنادی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں