The news is by your side.

Advertisement

راؤ انوارسےمتعلق دو سے تین دن میں پیشرفت ہوجائےگی‘ آئی جی سندھ

کراچی : چیف جسٹس آف پاکستان نے آئی جی سندھ پولیس کو سابق ایس ایس پی ملیر راؤ انوار سے متعلق رپورٹ پیر تک جمع کرانے کا حکم دے دیا۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں نقیب اللہ قتل از خود نوٹس کیس کی سماعت کے دوران آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ نے عدالت کو بتایا کہ راؤانوارسے متعلق فوٹیجزمل چکیں، جائزے کے لیے مزید وقت درکارہے۔

آئی جی سندھ پولیس نے سپریم کورٹ سے درخواست کی کہ راؤ انوارکی گرفتاری کے لیے مزید مہلت دی جائے جس پر چیف جسٹس نے اسفتسار کیا کہ آپ کوکتنی مہلت دی جائے، اے ڈی خواجہ نے جواب دیا کہ راؤ انوارسے متعلق دو سے تین دن میں پیشرفت ہوجائے گی۔

چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا کہ آئی جی سندھ کو پیر تک رپورٹ جمع کرانے کا حکم دیتے ہوئے کہا کہ نقیب اللہ قتل کیس کو اسلام آباد میں سنیں گے۔

عدالت میں سماعت کے دوران چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ اے ایس ایف سے کون آیا ہے جس پر انہیں بتایا گیا کہ اے ایس ایف سے کوئی پیش نہیں ہوا بعدازاں سپریم کورٹ نے کیس کی سماعت پیر تک ملتوی کردی۔


نقیب اللہ قتل کیس، راؤ انوار کا ایک اور خط سپریم کورٹ کو موصول


خیال رہے کہ دو روز قبل نقیب اللہ قتل ازخود نوٹس کیس میں سابق ایس ایس پی ملیر راؤ انوار کا ایک اور خط سپریم کورٹ کوموصول ہوا تھا جس میں ملزم نے بینک اکاؤنٹس کھولنے اور میڈیا سے رابطے کی اجازت مانگی تھی۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں