نااہل وزیراعظم نوازشریف کیخلاف توہین عدالت کی درخواست پر فیصلہ محفوظ
The news is by your side.

Advertisement

نااہل وزیراعظم نوازشریف کیخلاف توہین عدالت کی درخواست پر فیصلہ محفوظ

اسلام آباد : نااہل وزیراعظم نوازشریف کے خلاف توہین عدالت کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کرلیا گیا ہے، جو جلد ہی سنائے جانے کا امکان ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباسد ہائیکورٹ میں نااہل وزیراعظم نوازشریف کیخلاف توہین عدالت کیس کی سماعت ہوئی ، اسلام آباد ہائیکورٹ کی ایک رکنی بینچ نے توہین عدالت کی درخواستوں پر سماعت کے بعد فیصلہ محفوظ کرلیا جو جلد ہی سنائے جانے کا امکان ہے۔

توہین عدالت کی درخواستیں اسلام آباد ہائیکورٹ میں عوامی تحریک کے رہنماخرم نواز گنڈا پور اور دیگرنے دی تھیں۔

درخواست گزار کے وکیل مخدوم محمد نیاز انقلابی ایڈووکیٹ عدالت میں پیش ہوئے اور موقف اختیار کیا کہ نواز شریف نے عدالتوں کیخلاف ہرزہ سرائی کی، آئین یہ حق نہیں دیتا کہ عدالتی احکامات کی توہین کی جائے، ہجوم اکٹھا کرکے عدالتوں سےمتعلق ہرزہ سرائی قابل سزاجرم ہے۔

مخدوم نیاز انقلابی نے استدعا کی کہ مجرمانہ خاموشی پرہائیکورٹ پیمرا کوبھی احکامات جاری کرے۔

جسٹس محسن اخترکیانی نے استفسار کیا کہ کس عدالت کیخلاف نواز شریف نےتوہین عدالت کی ہے، اسلام آبادہائیکورٹ کےپاس ازخودنوٹس کا کوئی اختیار نہیں ، صرف سپریم کورٹ کوازخود نوٹس لینے کا اختیار ہے۔

وکیل نے کہا سیکشن11کےتحت کوئی بھی شخص درخواست دے سکتا ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں