The news is by your side.

Advertisement

کشمیریوں پر ظلم ڈھانے کیلئے مودی سرکار کا نیا حربہ

سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں مودی سرکار نے کشمیریوں پر ظلم ڈھانے کا نیا حربہ اختیار کرلیا ہے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مودی سرکار نے مقبوضہ کشمیر میں ایک اور غیر قانونی قدم اٹھاتے ہوئے خواتین فوجیوں کو وادی میں تعینات کردیا ہے۔

آسام رائفلز سے تعلق رکھنے والی خواتین فوجیوں کو وسطی کشمیر کے ضلع گاندربل میں تعینات کیا گیا ہے، ان کی تعیناتی موبائل چیک پوسٹوں پر کی گئی ہے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق خواتین اہلکار نام نہاد سرچ آپریشن کےدوران بھارتی فورسز کی مدد کرینگی، ساتھ ہی خواتین فوجیوں کو بھی منشیات کی اسمگلنگ کی روک تھام کا کام سونپا گیا ہے۔

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق اس غیر قانونی اقدام کا مقصد وادی میں جعلی سرچ آپریشن کے دوران خواتین کی جانب سے شدید مزاحمت کو روکنا ہے۔

 

واضح رہے کہ بھارتی قابض افواج عرصہ دراز سے مقبوضہ وادی میں نام نہاد سرچ آپریشن کے دوران نہتے کشمیریوں کو شہید کرتی چلی آرہی ہے، ان نام نہاد اور جعلی آپریشن کے دوران کشمیری خواتین سراپا احتجاج رہی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں