The news is by your side.

Advertisement

مریم نواز کیخلاف غیرقانونی اراضی کیس، شریف خاندان کی مشکلات میں اضافہ

لاہور : مریم نواز کے خلاف غیر قانونی اراضی کی انکوئری کے معاملے پر شریف خاندان کی مشکلات میں اضافہ ہوگیا، نیب نے شریف برادران کے خلاف بھی تحقیقات شروع کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق قومی احتساب بیورو لاہور نے مریم نواز کے خلاف غیر قانونی اراضی کی انکوئری کے معاملہ پر سابق وزیراعظم نوازشریف اور اپوزیشن لیڈر شہبازشریف کے خلاف بھی تحقیقات کا آغاز کردیا۔

نیب کا کہنا ہے کہ شریف خاندان کی جانب سے 2013 میں کل 3ہزار 568 کنال رقبہ زمین خریدی گئی، سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کے نام12 ایکڑ جو 96 کنال بنتی ہے، زمین منتقل ہوئی۔

ذرائع کے مطابق سابق وزیر اعلی پنجاب شہباز شریف کے نام منتقل ہونیوالی زمین کا رقبہ بھی 12 ایکڑ یعنی 96 کنال تھا، نیب نے متعلقہ محکموں سے اراضی کا ریکارڈ طلب کر لیا ہے۔

یاد رہے کہ نیب نے مریم نواز کو رائے ونڈ جاتی عمرہ کے علاقے میں 200 ایکڑ اراضی غیر قانونی طور پر اپنے نام منتقل کرنے کے الزام میں طلب کیا تھا ، ذرایع کے مطابق 2014 میں رائے ونڈ میں مریم نواز کے نام 2 سو ایکڑ زمین منتقل کی گئی ، 100 کنال زمین شہباز شریف اور 100 کنال زمین نواز شریف کے نام منتقل کی گئی۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ زمین منتقلی میں ایل ڈی اے کے قواعد و ضوابط کو نظر انداز کیا گیا، شریف فیملی کی اراضی کے ارد گرد تعمیرات کو روکنے کے لئے اراضی کو گرین لینڈ قرار دیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں