The news is by your side.

شہباز حکومت کی مشکلات میں اضافہ: آئی ایم ایف نے تاریخ کی سخت ترین شرائط سامنے رکھ دیں

اسلام آباد : آئی ایم ایف نے شہباز حکومت کے سامنے تاریخ کی سخت ترین شرائط رکھ دیں، جس میں عمران حکومت کا فروری میں دیا گیا ریلیف پیکج ختم کرنا ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق آئی ایم ایف سے تاریخ کا سخت ترین شرائط کا پیکج سامنے آگیا، دستاویز میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان کو مستقبل میں بھی پے در پے شرائط کا سامنا کرنا ہوگا۔

آئی ایم ایف کی جائزہ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ عمران حکومت کا فروری میں دیا گیا ریلیف پیکج ختم کرنا ہوگا۔

دستاویز میں کہنا تھا کہ پٹرولیم مصنوعات پر لیوی 30 روپے سےبڑھا کر 50 روپے کرنا ہوگی اور لیوی سے855 ارب روپےعوام سے وصول کرنا ہوں گے۔

جائزہ رپورٹ کے مطابق ڈیولپمنٹ لیوی پوری کرنے کی وجہ سے پیٹرول اور ڈیزل پر عوام کو ریلیف کم ملے گا، عالمی منڈی میں پٹرول سستاہوا تو پٹرولیم مصنوعات پر 10.5 فیصد سیلز ٹیکس وصول کیا جائے گا۔

اسی طرح بجلی کیلئے رعایتی نرخ مرحلہ وارختم کر نا ہوں گی ، آئی ایم ایف کی شرط سے بجلی کاٹیرف 26 روپے فی یونٹ تک پہنچ جائے گا۔

دستاویز میں بتایا گیا کہ جولائی اوراگست میں بجلی کابنیادی ٹیرف 7 روپے 40 پیسے بڑھایاجا چکا ہے ، اس کے علاوہ ارکان پارلیمنٹ اور بیوروکریسی کےاثاثوں کی تفصیلات تک عوام کورسائی دی جائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں