The news is by your side.

Advertisement

سفیر پاکستان کا امریکی اخبار میں مقبوضہ کشمیر پر اہم مضمون

اسلام آباد: سفیر پاکستان ڈاکٹر اسد مجید خان نے امریکی اخبار واشنگٹن ٹائمز میں ایک اہم مضمون میں ایک بار پھر عالمی سطح پر مقبوضہ کشمیر کے المیے کو اجاگر کر دیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق اسد مجید خان نے اخبار میں لکھا کہ مقبوضہ کشمیر اس وقت ڈبل لاک ڈاؤن کا شکار ہے، اور کشمیری گزشتہ 9 ماہ سے بھارتی حکومت کے ہاتھوں لاک ڈاؤن کی صعوبتیں برداشت کر رہے ہیں۔

پاکستانی سفیر نے لکھا کہ کرونا وائرس نے مقبوضہ وادی میں صورت حال کو مزید تشویش ناک بنا دیا ہے، مودی سرکار نے کشمیری عوام پر ظلم و ستم کی انتہا کر دی ہے، بھارت نے مقبوضہ کشمیر کی آبادی کے تناسب کو بدلنے کی بھی کوشش کی۔

اسد مجید خان نے لکھا بھارتی حکومت نے مسلم اقلیتوں کی شہریت کو ختم کرنے کے لیے نیا قانون پاس کیا، مودی ہندوتوا کے فلسفے پر عمل پیرا ہے، بھارت کو بتدریج ہندو راشٹریہ میں تبدیل کیا جا رہا ہے۔

پاکستان کے سفیر نے مضمون میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی مصالحت کی پیش کش قبول کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔

خیال رہے کہ مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی ریاستی دہشت گردی مسلسل جاری ہے، گزشتہ روز بھی پلواما اور شوپیاں میں بھارتی فورسز نے نام نہاد سرچ آپریشن کیا، کشمیری میڈیا کے مطابق بھارتی فورسز نے علاقے کا محاصرہ کیا اور متعدد نوجوانوں کو گرفتار کر لیا، اور گھروں میں گھس کر خواتین سے بدتمیزی کی۔ بھارتی فوج نے اس سے ایک روز قبل 2 کشمیری نوجوانوں کو شہید کر دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں