The news is by your side.

Advertisement

عمران خان نااہلی کیس کی سماعت 26 ستمبر تک ملتوی

اسلام آباد: سپریم کورٹ میں عمران خان نااہلی کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس نے کہا کہ بنی گالہ جائیداد کی خریداری کے لیے کوئی رسید نہیں دی گئی۔ لندن سے منتقل رقم پر مختلف مؤقف اپنائے گئے۔ قرض جمائما سے لیا گیا تو جائیداد جمائما کے نام کیسے منتقل ہوئی۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں عمران خان نا اہلی کیس کی سماعت ہوئی۔

دوران سماعت چیف جسٹس نے تحریک انصاف کے وکیل نعیم بخاری سے استفسارکیا کہ جمائما سے رقم کی تصدیق شدہ دستاویزات کہاں ہیں۔

چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ لندن سے رقم منتقلی پر مختلف مؤقف اپنائے گئے۔ دستاویزات میں بتایا گیا کہ جائیداد کی رقم جمائما نے دی، جب قرض جمائما سے لیا تو جائیداد جمائما کے نام کیسے منتقل ہوئی۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ بنی گالہ جائیداد کی خریداری کے لیے کوئی رسید فراہم نہیں کی۔ عمران خان کو بینک سے ملنے والی رقم کی تفصیلات دیکھنا چاہتے ہیں۔ جمائما نے نمائندے کے ذریعے رقم کیوں بھجوائی۔ جس نمائندے کو رقم بھیجی اس کا کہیں ذکر نہیں۔ عمران خان اپنا تحریری جواب واپس نہیں لے سکتے۔

عمران خان کے وکیل نعیم بخاری نے کہا کہ اس حوالے سے وضاحت پیش کریں گے جس پر چیف جسٹس نے کہا کہ یہ بات ذہن نشین کرلیں کہ وضاحت دینا پڑے گی۔

کیس کی مزید سماعت 26 ستمبر تک ملتوی کردی گئی۔


 

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں