The news is by your side.

عمران خان نے اعظم سواتی کی دوبارہ گرفتاری فاشزم قرار دیدی

پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان نے سینیٹر اعظم سواتی کی دوبارہ گرفتاری کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس ریاستی فاشزم کے خلاف سب کو آواز اٹھانا ہوگی۔

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین اور سابق وزیراعظم عمران خان نے سینیٹر اعظم سواتی کی ایف آئی اے کے ہاتھوں دوبارہ گرفتاری کو فاشزم قرار دیتے ہوئے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر اس کی مذمت کی ہے۔

عمران خان نے کہا کہ ناانصافی پر اعظم سواتی نے ٹوئٹ کیا اور دوبارہ گرفتار ہو گئے۔ حیران ہوں تیزی سے نہ صرف بنانا ری پبلک بلکہ ایک فاشسٹ ریاست کی جانب بڑھتے جا رہے ہیں۔ اس ریاستی فاشزم کے خلاف سب کو آواز اٹھانی ہوگی۔

پی ٹی آئی چیئرمین نے مزید کہا کہ کوئی کیسے نہیں سمجھ سکتا کہ سینیٹر سواتی پر کیا گزری؟ حراست میں تشدد، بلیک میلنگ کی ویڈیو انکی اہلیہ کو بھیجنے کی تکلیف کو کیسے سمجھا جا سکتا ہے؟

انہوں نے کہا کہ نا انصافی پر ان کے جائز غصے، مایوسی اور سپریم کورٹ میں اپیل کے باوجود دروازے ان کے لیے بند  رہے۔

واضح رہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے سینیٹر اعظم سواتی کو آج ایک بار پھر گرفتار کرلیا گیا ہے ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ نے گرفتاری کی تصدیق کر دی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق ایف آئی اے کی 3 رکنی ٹیم نے اعظم سواتی کے فارم ہاؤس پر چھاپہ مارا۔ ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ نے گرفتاری کی تصدیق کر دی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پی ٹی آئی سینیٹر اعظم سواتی پھر گرفتار

ایف آئی اے نے اعظم سواتی کے متنازع بیان پ رنیا مقدمہ بھی درج کیا ہے۔ یہ مقدمہ سائبر کرائم ونگ میں ایف آئی اے کے ٹیکنیکل اسسٹنٹ انیس الرحمان کی مدعیت میں تضحیک اور پیکا ایکٹ کے تحت درج کیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں