The news is by your side.

Advertisement

بی جے پی رہنما کا گستاخانہ بیان: ”او آئی سی سخت ایکشن لے“

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے بھارت کی حکمران جماعت کی جانب سے پیغمبر اسلام ﷺ کے خلاف گستاخانہ بیان پر اسلامی تعاون تنظیم سے سخت کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر سابق وزیر اعظم عمران خان نے لکھا کہ نبی ﷺ پر بھارتیہ جنتا پارٹی کے ترجمان کے نفرت انگیز حملے کی شدید مذمت کرتے ہیں۔

عمران خان نے کہا کہ نریندر مودی حکومت مسلمانوں کے خلاف اشتعال انگیزی اور نفرت کی پالیسی پر عمل پیرا ہے، بھارتی حکومت کی سرپرستی میں مسلمانوں پر حملے کرائے جا رہے ہیں۔

مزید پڑھیں: عمانی مفتی اعظم نے بھارت کے بائیکاٹ کا اعلان کر دیا

چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ نبی ﷺ کی گستاخی مسلمانوں کے لیے سب سے تکلیف دہ عمل ہے، تمام مسلمان نبی ﷺ سے شدید محبت اور انتہائی تعظیم کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ او آئی سی مودی کے بھارت کے خلاف سخت ایکشن لے، افسوس کہ اسلاموفوبیا پالیسیوں پر بھارت کو کچھ نہیں کہا جاتا ہے۔

قبل ازیں وزیر اعظم شہباز شریف نے بھارتی حکمران جماعت کی جانب سے پیغمبر اسلام ﷺ کے خلاف گستاخانہ بیان کی شدید الفاظ میں مذمت کی تھی۔

وزیر اعظم نے اپنے بیان میں مطالبہ کیا کہ دنیا بھارتی انتہا پسندی کا نوٹس لے، بارہا کہہ چکے ہیں کہ فاشسٹ مودی کی قیادت میں بھارت مذہبی آزادیوں کو پامال کررہا ہے، بھارت میں مسلمانوں پر شدید ظلم وستم کیا جارہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں