The news is by your side.

افغانستان میں لڑکیوں کو پانچویں جماعت تک تعلیم حاصل کرنے کی اجازت مل گئی

کابل: عالمی دباؤ کی وجہ سے افغانستان میں لڑکیوں کو پانچویں جماعت تک تعلیم حاصل کرنے کی اجازت مل گئی۔

افغان میڈیا کے مطابق افغان وزارت تعلیم سے جاری اعلامیے میں لڑکیوں کو پانچویں جماعت تک تعلیم جاری رکھنےکی اجازت دی گئی ہے۔

لڑکیوں کی تعلیم سے متعلق افغان وزارتِ تعلیم نے اعلامیہ جاری کر دیا جس کے تحت اسکولز اور دیگر تعلیمی مراکز میں لڑکیاں پانچویں جماعت تک تعلیم جاری رکھ سکتی ہیں۔

وزارت برائے تعلیمی مراکز نے افغانستان کے اسکولوں، مدارس اور تعلیمی مراکز کو ہدایت کی گئی ہےکہ پانچویں جماعت تک لڑکیوں کے لیے اسکول و تعلیمی مراکز کھول دیے جائیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ ماہ طالبان حکام نے لڑکیوں کی اعلیٰ تعلیم پر پابندی لگائی تھی جس کے بعد کئی صوبوں میں لڑکیوں کے پرائمری اسکول بھی بند کر دیےگئے تھے۔

اس پابندی کے بعد متعدد شہروں میں خواتین نے اس فیصلے کے خلاف احتجاج ریکارڈ کیا، جبکہ دنیا بھر میں طالبان کے اس عمل پر تنقید کی گئی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں