The news is by your side.

Advertisement

فیصل آباد میں آوازے کسنے سے روکنے پر میاں بیوی پر وحشیانہ تشدد

فیصل آباد میں اوباش نوجوانوں نے بدتمیزی اور بیہودہ گفتگو سے روکنے پر میاں بیوی کو بدترین تشدد کا نشانہ بنا ڈالا۔

ملک بھر میں خواتین سے بدتمیزی و تشدد کے واقعات میں تیزی سے اضافہ ہونے لگا، پنجاب کے ایک اور شہر میں جوڑتے سے بدتمیزی اور تشدد کا واقعہ رونما ہوا ہے جس میں ملزمان نے جوڑے کے ساتھ مارپیٹ کی ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ فیصل آباد کے بھائی والا میں آوازے کسنے سے روکنے پر میاں بیوی کو تشدد کا نشانہ بنایا ہے، پولیس نے تھانہ ملت ٹاؤن سے واقعے میں ملوث ملزمان کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

پولیس نے متاثرہ خاتون کی مدعیت میں واقعے کا مقدمہ درج کیا اور مقدمے میں ہراساں کرنے سمیت چار دفعات شامل کی گئی ہیں۔

متاثر خاتون کا کہنا ہے کہ شوہر کے ساتھ رکشے میں جارہی تھی کہ راستے میں شوہر نے دودھ لینے کی غرض سے رکشہ رکوایا اور نیچے اتر کر دودھ لینے چلے گئے۔

خاتون نے بتایا کہ شوہر کے جاتے ہی قریب کھڑے افراد نے بیہودہ گفتگو کرنا شروع کردی، جس پر میرے میں نے ان اوباشوں کو منع کیا اور میرے شوہر نے انہیں روکنے کی کوشش کی تو 10 افراد نے ہم دونوں کو گھونسے اور تھپڑ مارنا شروع کردیا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں