The news is by your side.

Advertisement

بھارت کرونا وائرس : ایک مریض کی موت کے بعد اسپتال کا پورا عملہ قرنطینہ منتقل

جھاڑ کھنڈ : بھارت میں کرونا وائرس سے ایک شخص کی ہلاکت کے بعد اسپتال اسٹاف کے سو سے زائد افراد کو وائرس کے شبے میں قرنطینیہ میں بھیج دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق بھارت کی ریاست جھاڑکھنڈ کے دارالحکومت رانچی کے گروگرام اسپتال میں ایک شخص کی کورونا وائرس سے ہلاکت کے بعد اسپتال کے اسٹاف اور دیگر کو قرنطینیہ میں بھیج دیا گیا ہے، قرنطینہ جانے والے افراد کی تعداد سو سے زائد بتائی جارہی ہے۔

اس حوالے سے اسپتال کے ایک سینئر عہدیدار نے میڈیا کو بتایا کہ گروگرام کے ایک اسپتال میں کورونا وائرس کے انفیکشن کی وجہ سے ایک ریٹائرڈ سرکاری اہلکار کی ہلاکت ہوئی تھی۔

ہلاک ہونے والے بریٹیو سوسائٹی میں واقع ایک اپارٹمنٹ میں رہائش پذیر ڈسٹرکٹ ڈویلپمنٹ کمشنر (ڈی ڈی سی) کو 31 مارچ کو برین ہیمرج ہوا تھا اور اسے علاقے کے نجی اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔

جس کے بعد انہیں 16 اپریل کو گروگرام کے اسپتال لے جایا گیا، جہاں وہ ہفتے کے روز وہ چل بسے، رانچی کے ڈپٹی کمشنر رائے مہپترے نے میڈیا کو بتایا کہ اسپتال کے عملے اور اس کے اپارٹمنٹ کے دیگر رہائشیوں کو بھی قرنطین کردیا گیا ہے۔

ان کے خون کے نمونے جانچ کے لئے لئے گئے ہیں حالانکہ اسپتال کو سیل نہیں کیا گیا ہے۔ دریں اثنا جھاڑکھنڈ میں کورونا وائرس سے مثبت پائے جانے والے افراد کی تعداد 35 ہوگئی ہے جن میں 18 رانچی کے ہندپیری علاقے سے ہیں۔

اس کے علاوہ رانچی کے صدر اسپتال میں ایک بچے کو جنم دینے والی خاتون میں بھی یہ ٹیسٹ مثبت پایا گیا ہے، حکام کے مطابق اس خاتون کے نومولود تین دن کے بچے کا بھی کورونا ٹیسٹ کیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں