27.9 C
Ashburn
بدھ, مئی 22, 2024
اشتہار

بھارت میں گائے محافظ کے نام پر ایک اور مسلمان کا بے دردی سے قتل

اشتہار

حیرت انگیز

بھارت میں گائے رکشا کے نام پر ایک اور مسلمان شہری کو  بے دردی سے قتل کر دیا گیا۔

بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق بھارتی ریاست بِہار میں 56 سالہ نسیم قریشی کو جنونی ہندو انتہا پسندوں نے گائے کا گوشت لے جانے کے شبے میں جان سے مار ڈالا۔

رپورٹ کے مطابق ہندو انتہا پسند ہجوم نے نسیم قریشی اور بھتیجے فیروز احمد قیرشی کو گھیر کر تشدد کا نشانہ بنایا، دونوں رحم کی اپیلیں کرتے رہے لیکن سخت دل ہجوم کو رحم نہ آیا جس کے بعد نسیم قریشی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا جبکہ بھتیجا بھی خون میں لت پت ہو گیا۔

- Advertisement -

رپورٹ کے مطابق پولیس واقعے کی تفتیش کر رہی ہے کہ آیا ان کے پاس گائے کا گوشت تھا یا نہیں، اس کے علاوہ مقامی سرپنچ سوشیل سنگھ اور دو مقامی افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

پولیس دیگر دو افراد کو بھی ڈھونڈ رہی ہے جن کے نام مقتول کے بھتیجے نے ایف آئی آر شامل کیے ہیں۔

Comments

اہم ترین

ویب ڈیسک
ویب ڈیسک
اے آر وائی نیوز کی ڈیجیٹل ڈیسک کی جانب سے شائع کی گئی خبریں

مزید خبریں