The news is by your side.

Advertisement

کشیدگی ختم، جنگ کے بادل چھٹ گئے، بھارت کا ہائی کمشنر واپس بھیجنے کا فیصلہ

نئی دہلی: پاک بھارت کشیدگی کا ماحول تھمنے لگا، پاکستان کے بعد بھارت نے بھی اپنے ہائی کمشنر کو اسلام آباد واپس بھیجنے کا فیصلہ کرلیا۔

سفارتی ذرائع کا کہنا ہے کہ بھارتی ہائی کمشنز اجے بساریہ کل اسلام آباد پہنچ کر اپنے ذمہ داریاں سنبھالیں گے۔ بھارت نے کشیدگی کا ماحول کم ہونے کے بعد کمشنر کو واپس بھیجنے کا فیصلہ کیا۔

یاد رہے کہ مقبوضہ کشمیر کے علاقے پلوامہ میں ہونے والے خودکش دھماکے کے بعد دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی خطرناک حد تک بڑھ گئی تھی البتہ پاکستان کی خطے میں امن کی خواہش کیوجہ سے حالات بدستور صحیح سمت جارہے ہیں۔

مزید پڑھیں: پاکستان نے بھارت سے اپنے ہائی کمشنر کوواپس بلا لیا

پاکستان نے کشیدگی بڑھنے کے بعد ہائی کمشنر سہیل محمود کو 18 فروری کو طلب کرلیا تھا جس کے بعد وہ جمعرات 7 مارچ کو نئی دہلی واپس پہنچ گئے جبکہ بھارت نے 15 فروری کو اپنے ہائی کمشنر کو دہلی بلا لیا تھا۔

یاد رہے کہ پاکستان نے فوقیت حاصل کرنے کے باوجود بھارت سے مذاکرات کی بات کی اور پلوامہ حملے کے شواہد فراہم کرنے کا مطالبہ کیا تھا تاہم ابھی تک مودی سرکاری نے کوئی ثبوت فراہم نہیں کیا۔

پاکستان نے خطے میں کشیدگی کم کرنے کے لیے بھارتی پائلٹ ابھی نندن کو رہا کیا، اس اقدام کو دنیا بھر میں سراہا گیا۔ عالمی طاقتوں نے بھارت کو بھی جارحانہ اقدامات سے باز رہنے کا مشورہ دیا جبکہ دو بار شکست کے بعد اپوزیشن جماعتوں نے بھی حکومت پر شدید تنقید کی۔

یہ بھی پڑھیں: ایم کیوایم رہنماخواجہ سہیل منصور نے بھارتی ہائی کمشنر کی دعوت ٹھکرادی

حکومتِ پاکستان اور پاک فوج کے ترجمان نے دو ٹوک مؤقف اختیار کیا تھا کہ ہم پہل نہیں کریں گے البتہ اگر حملہ کرنے کی کوشش کی گئی تو بھرپور دفاع کریں گے جس کا ثبوت بری ، بحری اور فضائیہ نے دنیا کو دیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں