The news is by your side.

Advertisement

بھارتی میڈیا کا پاکستان کیخلاف پروپیگنڈہ، لینے کے دینے پڑگئے

کراچی : گزشتہ دنوں پاکستان میں ہونے والے واقعات کی بھارتی میڈیا نے انتہائی بھونڈے انداز میں رپورٹنگ کی جس کے اسے لینے کے دینے پڑ گئے۔

بھارتی میڈیا کی جانب سے اس کی رپورٹوں میں کراچی میں ہونے والے واقعات کو نہ صرف خانہ جنگی سے تعبیر کیا گیا بلکہ خواہشات کو خبریں بنا کر پیش کیا جسے عالمی سطح پر تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔

پاکستان کیخلاف کیے جانے والے پروپیگنڈے پر خود بھارتی میڈیا کا عالمی سطح پر مذاق بنایا گیا۔ بھارتی میڈیا اپنی اس احمقانہ خواہش کو خبر بنا کر چلاتا رہا کہ کراچی میں دو فریقین کے درمیان جھڑپیں شروع ہوگئی ہیں حالانکہ اس خبر کا دور دور تک حقیقت سے کوئی تعلق نہیں۔

اس سفید جھوٹ پر دنیا بھر میں کل اور آج دن بھر بھارتی میڈیا کو مذاق ک انشانہ بناتے ہوئے اسے دنیا کا جھوٹا ترین میڈیا قرار دیا گیا،بھارتی میڈیا نے اپنی رپورٹس میں کہا کہ کراچی کے علاقے گلشن باغ میں جھڑپیں شروع ہوگئیں۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ جھڑپیں تو ایک طرف کراچی میں تو گلشن باغ نام کا ہی کوئی علاقہ تک نہیں اور ہوتا بھی کیسے کیونکہ گلشن اور باغ کا تو مطلب ایک ہی ہے، ایسا احمقانہ نام متعصب بھارتی میڈیا کو ہی سوجھ سکتا تھا۔

پاکستان کیخلاف اس شرمناک پروپیگنڈے کو پھیلانے میں بھارتی ٹی وی چینل سی این این نیوز 18، ٹائمز ناؤ جیسے بڑے ادارے شامل تھے۔

اس حوالے سوشل میڈیا پر پاکستانی صحافی طلعت اسلم نے بھارتی میڈیا کا مذاق اُڑاتے ہوئے کہا کہ کراچی میں سول وار کے قریب ترین چیز سول لائنز تھانہ ہے اور آرٹلری کے نام سے ’آرٹلری میدان تھانہ‘ہے جو میرے گھر کی کھڑکی سے نظر آتا ہے۔

ایک اور صحافی مبشر زیدی نے مذاق اُڑاتے ہوئے کہا کہ بھارتی میڈیا نے کراچی میں دو بھارتی شہروں کے نام سے معروف دکانوں کا حوالہ دیا اور کہا کہ ان دکانوں پر صورتحال سنجیدہ ہے۔

ایک پاکستانی وکیل ریما عمر نے اپنے خیالات ک ااظہار کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی میڈیا فکشن کو خبر بنا کر پیش کر رہا ہے، پاکستانی مصنفہ بینا شاہ نے لکھا کہ وہ ابھی ابھی شہر سے سودا سلف خرید کر لائی ہیں اور شہر میں کوئی خانہ جنگی نہیں ہو رہی۔

واضح رہے کہ اس سے قبل بھی بھارتی میڈیا نے گزشتہ روز ہرزہ سرائی اور جھوٹ کی تمام حدیں پھلانگتے ہوئے کراچی میں گیس دھماکے کو اداروں کے درمیان لڑائی قرار دے دیا تھا۔

پاکستانی صارفین نے اس بے ڈھنگے پروپیگنڈے پر سوشل میڈیا پر بھارتی میڈیا کی خوب کلاس لی، بھارتی میڈیا کی جانب سے ایسے ایسے افسانے گھڑے گئے کہ خود بھارتی شہری بھی حیران رہ گئے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں