بھارتی فوج کی فائرنگ سے 4 کشمیری شہید، درجنوں زخمی martyr 4 kashmiri
The news is by your side.

Advertisement

بھارتی فوج کی فائرنگ سے 8 کشمیری نوجوان شہید، درجنوں زخمی

سری نگر : بھارتی افواج نے کشمیر میں ریاستی دہشت گردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے کشمیر کے ضلع کلگام میں مزید آٹھ کشمیریوں کو شہید کردیا، 4 روز میں شہادتوں کی تعداد 18 ہوگئی۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی درندہ صفت فوج کے کشمیریوں پر انسانیت سوز مظالم تھمنے کا نام ہی نہیں لے رہے کشمیری خواتین و مردوں پر بھارتی فورسز کے بہیمانہ سلوک نے بھارت کا بدنما چہرہ دنیا کے سامنے عیاں کردیا۔

کشمیری خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ بھارتی فورسز کے ظلم و بربریت کے نتیجے میں وادی کشمیر میں 4 روز دوران 5 ماہ حاملہ خاتون سمیت 18 کشمیری شہری شہید ہوچکے ہیں۔

مقامی خبر رساں اداروں کا کہنا تھا کہ وادی کشمیر پر قابض بھارتی فوجیوں نے ضلع کلگام کے علاقے لارو میں چادر اور چار دیواری کے تقدس کو روندتے ہوئے گھر گھر نام نہاد سرچ آپریشن کیا اور نہتے شہریوں کو زدکوب کرتے رہے۔

خبر رساں اداروں نے بتایا کہ ظالم بھارتی فورس نے سرچ آپریشن کے دوران تین نوجوانوں کو دہشت گرد قرار دیتے ہوئے بے دردی سے شہید کردیا۔

کشمیری میڈیا کا کہنا تھا کہ دہشت گرد بھارتی فوج کے ہاھتوں نوجوانوں کی بہیمانہ شہادت پر کشمیریوں نے شدید احتجاج کیا۔

کشمیری خبر رساں ایجنسی کے مطابق بھارتی فورسز کی ریاستی دہشت گردی کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین پر فورسز نے بے دریغ گولیاں برسا دیں جس کے نتیجے میں عبید نامی نوجوان شہید جبکہ درجنوں افراد زخمی ہوگئے۔

کشمیر میڈیا سروس کا کہنا ہے کہ بھارتی فورسز کی فائرنگ سے زخمی ہونے افراد میں 5 کی حالت تشویش ناک ہے جنہیں سری نگر اسپتال منتقل کردیا گیا ہے.

کشمیری انتظامیہ نے واقعے کے بعد وادی میں انٹرنیٹ اور موبائل فون سروس بند کردی ہے۔


مزید پڑھیں :کشمیر: بھارتی فورسز کی اندھا دھند فائرنگ سے حاملہ خاتون شہید


یاد رہے کہ گذشتہ روز مقبوضہ کشمیر کے ضلع پلوامہ میں کچھ نامعلوم افراد نے بھارتی فورسز کے کیمپ پر دستی بم حملہ کیا تھا جس پر رد عمل دیتے ہوئے فورسز نے نہتے کشمیروں پر اندھادھند فائرنگ کی جس کی زد میں آکر فرودسہ اختر نامی حاملہ خاتون شہید ہوگئی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں