The news is by your side.

Advertisement

عالمی ادارے مقبوضہ کشمیر میں جارحیت اور نظر بندوں کی رہائی کیلئے کردار ادا کریں: حریت رہنما

سرینگر: مقبوضہ کشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرنس کے سینئر رہنما اشرف صحرائی نے عالمی اداروں پر زور دیا ہے کہ وہ مقبوضہ وادی میں بھارتی جارحیت کا سدباب کریں۔

تفصیلات کے مطابق حریت رہنما اشرف صحرائی نے کشمریی نوجوان حذیف احمد بٹ کو گرفتار کرکے ان پر کالا قانون ”پی ایس اے“ لگا کر جیل منتقل کرنے اور بومئی سوپور کے رہائشیوں غلام حسن شاہ، عرفان احمد اور عبدالمجید لوگری پورہ کو عدالت کے احاطے سے گرفتار کرنے کی سخت مذمت کی۔

انہوں نے کہا ہے کہ بھارتی حکمران کشمیریوں کو ہر طرح سے ستانے، تنگ کرنے اور انتقام لینے کی ظالمانہ پالیسی پر عمل پیرا ہیں، حذیف احمد بٹ کی عمر صرف 16سال ہے اور قانونی یا اخلاقی طور پر اس پر کالے قانون پی ایس اے کے اطلاق کاکوئی جواز نہیں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ تحریک حریت کے کارکن غلام حسن شاہ، عرفان احمد اور عبدالمجید تاریخ پیشی پر عدالت میں حاضر ہوئے تھے اور جب وہ واپس گھروں کو جانے لگے تو انہیں گرفتار کر لیا گیا جو سیاسی انتقام کے سوا کچھ نہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ سارے یہ چند ماہ پہلے ہی ایک طویل مدّت کے بعد جیل سے رہا ہوئے تھے۔ انہوں نے بانڈی پورہ کے رہائشی عبدالوحید کی مسلسل غیر قانونی نظربندی کی بھی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ان کی اہلیہ بھی کئی عارضوں میں مبتلا ہے مگر اس کے باوجود انہیں رہا نہیں کیا جارہا ہے۔

چیئرمین تحریک حریت نے انسانی حقوق کے عالمی اداروں سے اپیل کی کہ وہ کشمیری نظر بندی کی حالت زار کا نوٹس لیتے ہوئے انکی رہائی کیلئے کردار ادا کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں