دنیا بھر میں انٹرنیٹ سروس 48 گھنٹوں تک متاثر ہونے کا خدشہ -
The news is by your side.

Advertisement

دنیا بھر میں انٹرنیٹ سروس 48 گھنٹوں تک متاثر ہونے کا خدشہ

مرمتی کام کی وجہ سے سسٹم 48 گھنٹوں تک متاثر ہوسکتا ہے، انتظامیہ

کیلی فورنیا: انٹرنیٹ کارپوریشن آف اسائنڈ نیمز اینڈ نمبرز نے اگلے 48 گھنٹوں تک دنیا بھر میں انٹرنیٹ سروس بند ہونے کا خدشہ ظاہر کردیا۔

آئی سی اے این این کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق معمولی مرمت کے باعث انٹرنیٹ کو ضرورت پڑنے پر بند کیا جائے گا جس کی وجہ سے دنیا بھر میں سروس متاثر ہوگی۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ انٹرنیٹ استعمال کرنے والے صارفین کو اگلے 48 گھنٹوں کے دوران سروس استعمال کرنے میں مسائل پیش آسکتے ہیں جن میں ویب پیجز کا کھلنا شامل ہے۔

آئی سی اے این این کے مطابق ہیکرز کی جانب سے سائبر حملوں کے بڑھتے ہوئے واقعات کی وجہ سے انتظامیہ نے اصلاحات اور سیکیورٹی کے ڈھانچے کی تبدیلی کا فیصلہ کیا۔

مزید پڑھیں: کیبل نظام میں خرابی، پاکستان میں انٹرنیٹ سسٹم میں خلل

مرمتی کام کے دوران عالمی انٹرنیٹ کا خفیہ کوڈ تبدیل ہوگا جو ویب سائٹس کے ڈومینز کو محفوظ بناتا ہے۔

انٹرنیٹ کاپوریشن نے کہا ہے کہ صارفین کو پریشان ہونے کی ضرورت نہیں کیونکہ انٹرنیٹ سروس مکمل طور پر بند نہیں ہوگی البتہ کچھ ویب سائٹس مرمتی کام کے دوران کام کرتی رہیں گی۔

کمپنی نے رواں برس اگست میں مرمت کا اعلان کیا تھا، جس پر اب عملد درآمد ہونے جارہا ہے اور اس کام کا مقصد سائبر حملوں سمیت انٹرنیٹ کی فراہمی کو تیز ترین بنانا ہے۔

تازہ اطلاعات کے مطابق دنیا کے مختلف ممالک میں انٹرنیٹ سروس متاثر ہونا شروع ہوگئی جس کی وجہ سے صارفین کو شدید پریشانی کا سامنا ہے۔

یہ بھی پڑھیں: فائبر کیبل کی خرابی، انٹرنیٹ اورموبائل فون نیٹ ورک بحال ہونا شروع

یاد رہے کہ جولائی 2018 میں سیکیورٹی ماہرین نے سسٹم میں تکنیکی خرابی کی نشاندہی کی تھی جس کو قابو میں کرنے کے لیے اقدامات کیے گئے مگر انتظامیہ اس میں ناکام رہی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں