The news is by your side.

Advertisement

ایران نے امریکہ پر اربوں ڈالر جرمانہ عائد کردیا

تہران: ایران کی ایک عدالت نے امریکا کو حکم دیا ہے کہ وہ ملک کے جوہری سائنسدانوں کے قتل پر 4 ارب 30 کروڑ ڈالر ہرجانہ ادا کرے۔

ایران کی نیم سرکاری نیوز ایجنسی ISNA کے مطابق ایرانی عدالت نے حالیہ برسوں میں قتل ہونے والے جوہری سائنسدانوں کے اہل خانہ کی جانب سے دائر کیے گئے مقدمات پر فیصلہ سنادیا ہے، جس میں امریکا کو 4 ارب 30 کروڑ ڈالر مالیاتی اور غیر مالیاتی ہرجانہ ادا کرنے کا حکم دیا گیا ہے۔

ایرانی عدلیہ کے انسانی حقوق ڈویژن کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ تہران کی 55 ویں سول عدالت نے بین الاقوامی ذمہ داریوں کی خلاف ورزی کرتے ہوئے جوہری ماہرین کے قتل میں ملوث اسرائیل کی حمایت کرنے والی امریکی حکومت، اداروں اور حکام کو 4.3 بلین ڈالر مالیاتی اور غیر مالیاتی ہرجانہ ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔

یہ ابھی تک واضح نہیں ہے کہ ایرانی عدالت کے فیصلے پر عمل کیسے کیا جائے گا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ ماضی میں امریکی عدالتوں نے مختلف مواقع پر ایرانی حکومتی اداروں کے خلاف ہرجانہ ادا کرنے کا فیصلہ سنایا تھا۔

خیال رہے کہ ایران اپنے جوہری سائنسدانوں کے قتل کا الزام امریکا کے اتحادی اسرائیل پر عائد کرتا رہا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں