The news is by your side.

Advertisement

کس ملک میں 2 سال بعد کورونا پابندیاں ختم کردی گئیں؟

یورپی ملک آئرلینڈ میں کورونا سے بچاؤ کی اضافی ویکسینیشن کی کامیاب مہم کے بعد 2 سال سے جاری کورونا پابندیاں ختم کردی گئیں۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق آئرلینڈ میں اضافی ویکسینیشن کی کامیاب مہم سے ملک میں کورونا کے تشویشناک مریضوں کی تعداد میں اندازوں سے کئی گنا زیادہ کمی ہوئی ہے جس کے بعد وہاں کی حکومت نے2سال سے جاری تقریبا تمام پابندیاں اٹھالی ہیں۔

آئرلینڈ کے وزیراعظم مائیکل مارٹن نے پابندیاں اٹھانے کا اعلان ٹی وی پر اپنے قوم سے خطاب میں کیا۔

 آئرش وزیراعظم نے کہا کہ ہم نے اومیکرون کے طوفان کا مقابلہ کیا ہے، کورونا وبا کے دوران اپنے عوام سے بہت برے وقت میں بات کی ہے لیکن اب اچھا وقت آگیا ہے۔

مائیکل مارٹن کے مطابق اب ملک بھر میں ہوٹل اور بارز رات 8 بجے کے بعد بھی کھلے رہیں گے اور عوامی مقامات پر جانے والوں سے کورونا ویکسینیشن کا ثبوت نہیں مانگا جائے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ فروری میں ہونے والی قومی رگبی چیمپیئن شپ میں بھی شائقین پر کوئی پابندی نہیں ہوگی جب کہ تمام انڈور اور آؤٹ ڈور تقریبات بھی ہوسکیں گی، تاہم لوگوں کو فروری تک پبلک ٹرانسپورٹ اور دکانوں میں ماسک کا استعمال کرنا ہوگا۔

واضح رہے کہ کورونا وبا کے دوران آئرلینڈ یورپ کے ان چند محتاط ممالک میں شامل رہا جس نے اندرون اور بیرون ملک طویل ترین سفری پابندیاں عائد کیے رکھیں، 19 ماہ تک نائٹ کلبز بند رہے، تاہم اس دوران آئرلینڈ حکومت نے اپنے عوام کی سہولت کے لیے کئی موثر اقدامات بھی کیے تھے جنمیں ایک تہائی ٹیکس دہندگان کی ٹیکس ادائیگی کو موخر کرنا اور رواں برس اپریل تک خصوصی سبسڈی پروگرام کے تحت مالی مدد کی فراہمی شامل ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں