The news is by your side.

Advertisement

اسلامی نظریاتی کونسل کا اجلاس، بیک وقت تین طلاقیں قابل سزا قرار دینے پر اتفاق

اسلام آباد: ڈاکٹر قبلہ ایاز کی زیرصدارت اسلامی نظریاتی کونسل کا اجلاس ہوا جس میں بیک وقت تین طلاقیں قابل سزا قرار دینے پر اتفاق کیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق اسلامی نظریاتی کونسل کے ہونے اجلاس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ تمام مسالک کے جید علما کی مدد سے متفقہ طلاق نامہ ترتیب دیا جائے گا۔

ڈاکٹر قبلہ ایاز کی زیر صدارت اسلامی نظریاتی کونسل کے ہونے والے اجلاس میں بیک وقت تین طلاقیں قابل سزا قرار دینے سے متعلق فیصلہ کیا گیا ہے کہ علماء کرام سے مشاورت کی جائے گی۔

اجلاس میں کم عمری کی شادی کا معاملہ بھی زیر بحث آیا، کم عمری کی شادی کی حوصلہ شکنی کے لیے آگاہی مہم چلائی جائے گی۔

رواں سال فروی میں اسلامی نظریاتی کونسل کے چیئرمین قبلہ ایاز نےکہا تھا کہ بیک وقت تین طلاقوں کو قابلِ سزا جرم قرار دیا جائے گا۔

برطانوی نشریاتی ادارے کو انٹرویو دیتے ہوئے انھوں نے یہ بھی کہا تھا کہ اس سلسلے میں سفارشات تیار کر لی گئی ہیں جو جلد ہی پارلیمان میں پیش کر دی جائیں گی۔

خیال رہے کہ ماضی میں حقوق نسواں کے حوالے سے بھی اسلامی نظریاتی کونسل کے فیصلے سامنے آئیں جسے بعض طبقوں کی جانب سے متنازع قرار دیا جاتا رہا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں