The news is by your side.

Advertisement

حزب اللہ کی ایک اور سرنگ تباہ کردی، اسرائیل فورسز کا دعویٰ

تل ابیب : غاصب اسرائیلی فورسز نے لبنان کی سرحد سے متعصل صیہونی علاقے میں اسلامی مزاحمتی تنظیم حزب اللہ کی ایک اور سرنگ تباہ کرنے کا دعویٰ کردیا۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ فلسطین پر قابض صیہونی ریاست اسرائیل کی فورسز نے ناجائز ریاست کے سرحدی علاقے میں حزب اللہ کی جانب سے مسلح کارروائیاں کرنے کے لیے کھودی گئی سرنگوں کا دریافت کرنے کا انکشاف کیا تھا۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا تھا کہ صیہونی فورسز نے لبنان کی سرحد سے منسلک اسرائیلی حدود میں ایک اور سرنگ کا پتہ لگاکر تباہ کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

اسرائیلی حکام کا کہنا ہے کہ حزب اللہ کے جنگجوؤ اس سرنگ کے ذریعے اسرائیل میں داخل ہوکر مسلح کارروائیاں کرنے کا ارادہ رکھتے تھے۔

اسرائیلی فورسز کے ترجمان نے بتایا کہ دھماکا خیز مواد نصب کرکے ایک ہفتے میں یہ دوسری سرنگ مسمار کیا گیا ہے، جس نے حزب اللہ کے افراد اسرائیل میں داخل ہونے کی کوشش کررہے تھے۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ لبنان اور اسرائیل کے درمیان بنائی گئیں دوسری سرنگ دو سو میٹر لمبی اور دو میٹر چوڑی تھی۔

اسرائیلی افواج کے ترجمان کا کہنا ہے کہ مذکورہ علاقے میں حزب اللہ کی بنائی گئی مزید سرنگیں دریافت ہونے کا امکان ہے۔

ترجمان اسرائیلی افواج کا کہنا تھا کہ صیہونی فورسز مسلح کارروائیوں کے بنائی حزب اللہ کی سرنگوں تباہ کرنے کے ساتھ ساتھ فلسطین کی مزاحمتی تنظیموں کے ٹھکانوں کو بھی نقصان پہنچا رہی ہے۔

ایک ہفتہ قبل اسرائیلی حکام کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا تھا کہ صیہونی افواج نے اسرائیل پر حملوں کے لیے کھودی گئی سرنگوں کو منہدم کرنے کے لیے 4 دسمبر کی رات کام کا آغاز کردیا تھا۔

خیال رہے کہ صیہونی ریاست کے حکام نے کہا تھا کہ ایرانی حمایت یافتہ لبنانی تنظیم اس سے قبل بھی اقوام متحدہ کی قراردادوں کو پس پشت ڈالتے ہوئے سنگین خلاف ورزیاں انجام دے چکی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ حزب اللہ کی سنگین خلاف ورزیوں میں اقوام متحدہ کی قرار داد 1701 نمایاں ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ اسرائیلی حکام نے شمالی سرحد کے قریبی علاقوں کو عسکری زون میں تبدیل کرتے ہوئے بند کردیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں