The news is by your side.

Advertisement

کورونا وائرس نے سینکڑوں کمپنیاں دیوالیہ کردیں، عوام بے روزگار

ٹوکیو : کورونا وائرس نے جاپان میں عوام کی صحت کے ساتھ معیشت کو بھی تباہ کردیا، ملک کی گیارہ سو سے زائد کمپنیاں دیوالیہ ہوکر بند ہوگئیں۔

اس حوالے سے مالیاتی حیثیت کا جائزہ لینے والی ایک کمپنی کا کہنا ہے کہ گزشتہ سال فروری سے اب تک جاپان میں گیارہ سو کمپنیاں کورونا وائرس کی عالمی وبا کے سبب دیوالیہ ہو گئی ہیں۔

تیئکوکُو ڈیٹا بینک کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے سبب بدھ کی صبح تک گیارہ سو کمپنیاں یا تو دیوالیہ پن کی قانونی کارروائی مکمل کر چکی تھیں یا اس کی تیاری کر رہی تھیں۔

اس فہرست میں شراب خانے اور ریستوران 172 کی تعداد کے ساتھ پہلے، تعمیراتی کمپنیاں92 کے ساتھ دوسرے اور ہوٹل اور سرائے 79 کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہیں۔

تیئکوکُو ڈیٹا بینک کے مطابق ٹوکیو سے 264، اوساکا پریفیکچر سے 108، اور کاناگاوا پریفیکچر سے 64 کمپنیاں دیوالیہ ہوئی ہیں، کمپنیوں کے دیوالیہ ہونے کے سبب بے روزگاری  کی شرح میں بھی نمایاں اضافہ ہوا ہے۔

تحقیقی ادارے نے نشاندہی کی ہے کہ وہ شہری علاقے جو مرکزی حکومت کے ہنگامی حالت کے نفاذ کے تحت ہیں، وہاں شراب خانوں اور ریستورانوں کے دیوالیہ پن میں قابلِ ذکر اضافہ ہوا ہے۔

بینک کا کہنا ہے کہ اگر ٹوکیو اور اس کے تین ہمسایہ پریفیکچروں میں ہنگامی حالت میں توسیع کی گئی تو ذاتی صَرف میں طویل مدتی کمی سے بچنا ناممکن ہو جائے گا، جس کے نتیجے میں مزید کمپنیاں دیوالیہ ہوسکتی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں