The news is by your side.

Advertisement

کراچی پورٹ پر مزدوروں کے جاں بحق ہونے کی وجہ سامنے آ گئی

کراچی: وفاقی وزیر جہاز رانی و بندرگاہ فیصل سبزواری کراچی پورٹ پر حادثے کے بعد ہنگامی طور پر متاثرہ جہاز پر پہنچے، جہاں چیئرمین کے پی ٹی نادر ممتاز نے وفاقی وزیر کو تفصیلات سے آگاہ کیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر برائے بحری امور فیصل سبزواری کو متاثرہ جہاز پر بریفنگ میں بتایا گیا کہ جاں بحق ہونے والے مزدور ہیچ میں چلے گئے تھے جہان انھیں نہیں جانا چاہیے تھا، ہیچ میں جانے پر دونوں مزدور دم گھٹنے سے جاں بحق ہوئے۔

بد قسمت جاں بحق مزدوروں میں بدین کے حبیب اللہ اور اسلم سمون شامل ہیں، جن میں سے ایک کی لاش ہیچ سے نکال لی گئی ہے۔

اس دوران فیصل سبزواری نے جہاز سے خود ویڈیو بنائی اور اس میں حادثے کی تفصیل سے آگاہی دی، جہاز پر چیئرمین کے پی ٹی نادر ممتاز اور دیگر اداروں کے حکام بھی ان کے ہمراہ موجود تھے۔

وفاقی وزیر فیصل سبزواری نے ویڈیو میں بتایا کہ یہ درآمدی سویا بین ہے، جسے منتقل کیا جا رہا ہے، ہم یہاں پر موجود ہیں، یہاں کوئی گیس کا ایشو نہیں ہے، سارا عملہ کھڑا ہے، چیئرمین کے پی ٹی بھی موجود ہیں۔

فیصل سبزواری نے کہا یہ سامنے وہ ہیچ ہے جہاں بدقسمتی سے مزدور جاں بحق ہوئے، ہیچ میں جانے کے بعد ڈسٹ پارٹیکلز سانس کے ذریعے اندر جانے سے مزدوروں کا دم گھٹا۔

کراچی پورٹ پر سویابین کی منتلقی کے دوران حادثہ، 2 مزدور جاں بحق

وزیر پورٹس اینڈ شپنگ نے کہا کہ انھوں نے واقعے کے سلسلے میں اعلیٰ سطح پر تحقیقات کی ہدایت دے دی ہے، انکوائری رپورٹ ملتے ہی 24 گھنٹے میں اسے پبلک کر دیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں