spot_img

تازہ ترین

روسی صدر پیوٹن کی وزیراعظم شہباز شریف کو مبارکباد

روس کے صدر ولادیمیر پیوٹن نے شہباز شریف کو...

امریکا وزیراعظم شہباز شریف کیساتھ مشترکہ مفادات آگے بڑھانے کا خواہاں

واشنگٹن : امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان میتھو ملر...

وزیراعلیٰ کے پی آج اڈیالہ جیل میں بانی پی ٹی آئی سے ملاقات کریں گے

وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا علی امین گنڈاپور آج اڈیالہ جیل...

الیکشن کمیشن نے سنی اتحاد کونسل کی مخصوص نشستوں کی درخواست مسترد کردی

اسلام آباد: الیکشن کمیشن نے سنی اتحاد کونسل کی...

شہباز شریف نے وزیراعظم کےعہدے کا حلف اٹھالیا

اسلام آباد : شہباز شریف نے وزیراعظم کےعہدے کا...

شہریوں نے کے الیکٹرک کی گاڑیوں میں کچرا ڈالنا شروع کر دیا

کراچی: کے الیکٹرک کی جانب سے بجلی کے بلوں میں کے ایم سی چارجز وصول کرنے کے خلاف عوام کا سخت ردعمل سامنے آگیا۔

شہریوں نے کے الیکٹرک کے شکایتی مراکز اور 118 پر کال کر کے شکایت درج کروائیں اور احتجاجاً کے الیکٹرک کی گاڑیوں میں کچرا ڈالنا شروع کر دیا۔

مہنگائی کے ستائے شہریوں کا کہنا ہے کہ کے الیکٹرک والے بجلی دیتے نہیں اور ٹیکس وصول کرنے میں سب سے آگے ہیں، کے ایم سی کا ٹیکس لے رہے ہو تو کچرا بھی لے کر جاؤ۔

مزید پڑھیں: کے الیکٹرک نے بلوں میں کے ایم سی چارجز لینا شروع کر دیے

کے الیکٹرک اور کے ایم سی کے مابین بجلی کے بلوں میں ٹیکس وصولی کا معاہدہ طے پایا ہے جس پر عوام سخت ناراض ہیں۔ ٹیکس وصولی کے خلاف سوشل میڈیا پر کے الیکٹرک کے دفاتر کے سامنے کچرا ڈالنے کی مہم زور پکڑ رہی ہے۔

معاہدے کے مطابق 200 یونٹ استعمال پر 50 روپے اور 200 سے 700 یونٹ پر 150 روپے میونسپل ٹیکس عائد ہوگا۔ 700 سے زائد یونٹ استعمال کرنے والوں کو 200 روپے ماہانہ ٹیکس دینا ہوگا۔

کمرشل اور انڈسٹریل صارفین کو ماہانہ 200 روپے میونسپل ٹیکس کی صورت میں دینا ہوگا۔ ایک گھر میں ایک سے زائد میٹروں پر بھی ٹیکس وصول کیا جائے گا۔

شہر کے مجموعی طور پر 24 لاکھ صارفین سے میونسپل ٹیکس وصول کیا جائے گا۔

Comments

- Advertisement -