The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر میں ظلم و بربریت کا بازار گرم، مزید 2 کشمیری شہید

سرینگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی ریاستی دہشت گردی عروج پر ہے، ضلع بڈگام میں بھارتی فوج کی فائرنگ سے 2 کشمیری شہید ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق کشمیری میڈیا کا کہنا ہے کہ بھارتی فوج نے ضلع بڈگام کا محاصرہ کرلیا اور گھر گھر تلاشی لی۔ اس دوران انٹرنیٹ اور موبائل سروس بھی بند کردی گئی۔

کشمیری میڈیا کے مطابق بھارتی فوج کی تلاشی کے دوران فوج نے فائرنگ بھی کی جس سے 2 کشمیری نوجوان شہید ہوگئے۔

وادی میں شہادتوں کے خلاف حریت قیادت نے ہڑتال کی کال دے دی جس کے بعد مقبوضہ کشمیر میں مکمل ہڑتال ہے۔

یاد رہے کہ رواں ہفتے بھارتی فوج نے مقبوضہ وادی میں ظلم و بربریت کا بازار گرم کر رکھا ہے، بھارتی فورسز نے نام نہاد آپریشن کے نام پر 5 کشمیریوں کو شہید کردیا۔

اس کے اگلے ہی روز شوپیاں میں بھی سرچ آپریشن کیا گیا اور اس دوران مزید ایک اور کشمیری کو شہید کردیا گیا۔

ایک رپورٹ کے مطابق سال 2018 میں قابض بھارتی فوج نے حاملہ خواتین، بچوں اور اسکالرز سمیت 355 شہری شہید کردیے۔

دوسری جانب وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ کشمیر میں ایک لاکھ 8 ہزار بچے یتیم ہو چکے ہیں، مقبوضہ کشمیر کے لوگ مسلسل بے رحم قابض کے ظلم کا شکار ہیں۔

انہوں نے کہا تھا کہ قابض افواج ریپ کو ہتھیار کے طور پر استعمال کر رہی ہیں، بھارت تمام کشمیریوں کو دہشت گرد سمجھتا ہے، مقبوضہ وادی میں انسانی حقوق کی پامالی کی جاری ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں