The news is by your side.

مودی کے دیس میں غیر ملکی یوٹیوبر جنسی ہراسانی کا شکار

مودی کا بھارت نہ صرف مقامی خواتین بلکہ غیرملکی خواتین کیلئے بھی غیر محفوظ ہوتا جارہا ہے جہاں خواتین پر جنسی حملے روز کا معمول بن چکے۔

اسی طرح کا ایک ناخوشگوار واقعہ جنوبی کوریا سے تعلق رکھنے والی ایک خاتون یوٹیوبر کے ساتھ ممبئی میں پیش آیا، جہاں انہیں سرعام جنسی طورپر ہراساں کیاگیا۔

سوشل میڈیا پر جاری ایک ویڈیو میں ممبئی میں ایک شخص کو کوریا کی خاتون یوٹیوبر کو ہراساں اور اس کے ساتھ بدتمیزی کرتے ہوئے دکھایاگیاہے، رپورٹس کے مطابق خاتون اسٹریمر واردات کے وقت لائیو اسٹریمنگ کر رہی تھیں

ٹویٹر پر جاری اس ویڈیومیں دعویٰ کیا گیا ہے کہ جنسی ہراسانی کا نشانہ بننے والی خاتون کا تعلق جنوبی کوریا سے ہے اور یہ واقعہ بدھ کے روز ممبئی کے مضافاتی علاقے خار میں پیش آیا ۔

ویڈیو میں دکھایا گیا ہے کہ ایک نوجوان خاتون کے بہت قریب آتا ہے اور خاتون کے احتجاج کرنے پر وہ اس کا ہاتھ پکڑ کر اسے اپنی طرف کھینچنے کی کوشش کرتا ہے۔ جب خاتون نے دور جانے کی کوشش کی تووہ شخص دوبارہ موٹر سائیکل پر ایک دوست کے ساتھ نمودار ہوا اور اسے لفٹ دینے کی پیشکش کی جبکہ اس خاتون نے ٹوٹی پھوٹی انگریزی میں اسے بتایا کہ وہ لفٹ لینا نہیں چاہتی۔

پولیس کے مطابق انہیں اس ضمن میں کوئی شکایت موصول نہیں ہوئی تھی لیکن سوشل میڑیا پر ویڈیو وائرل ہونے کےبعد پولیس نے اس واقعہ کا از خود نوٹس لیتے ہوئے تحقیقات شروع کردی تھی۔

واقعے میں ملوث دو ملزمان کو گرفتار کرتے ہوئے ان کے خلاف آئی پی سی کے 354 کے تحت مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔ پولیس کے مطابق گرفتار ملزمان کو آج عدالت میں پیش کیا جائے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں