The news is by your side.

Advertisement

کے پی اسمبلی: پنجاب میں مزدوروں کے تحفظ کے لیے قرارداد منظور

پشاور: خیبر پختون خوا اسمبلی نے صوبہ پنجاب میں قوانین کی آڑ میں پختون مزدوروں کو بے جا تنگ کرنے کے خلاف قرارداد منظور کر لی۔

تفصیلات کے مطابق کے پی اسمبلی نے پنجاب میں پختون مزدوروں کو بے جا تنگ کرنے کے خلاف قرارداد منظور کر لی، قرارداد میں کہا گیا ہے کہ پنجاب میں رہایش ایکٹ کی آڑ میں پختون مزدوروں کو تنگ کیا جا رہا ہے۔

قرارداد کے متن میں مطالبہ کیا گیا کہ یہ ظالمانہ رویہ تعصب کو فروغ دے رہا ہے اسے روکا جائے، اور ایک پارلیمانی کمیٹی قائم کر کے پنجاب حکومت سے رابطہ کیا جائے۔

دریں اثنا، کے پی اسمبلی نے شہری تعلیم کے سلسلے میں بھی ایک اہم قرارداد منظور کی، قرارداد کے مطابق اسکولوں میں سوک ایجوکیشن سمیت مثبت سرگرمیوں کو فروغ دیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں:  کے پی اسمبلی میں یوم خواتین پر عورت مارچ کے خلاف مذمتی قرارداد منظور

یہ قرارداد تحریک انصاف کی سمیرا شمس نے پیش کی، قرارداد میں کہا گیا کہ تعلیمی اداروں میں سیکنڈری سطح پر سوک ایجوکیشن کو رائج کیا جائے۔

اسمبلی اجلاس میں چارسدہ پیپر ملز کی زمین سے متعلق بھی بحث کی گئی، تحریک انصاف کے فضل شکور نے کہا کہ ہاؤسنگ اسکیم کے لیے پیپر ملز کی زمین فروخت کی جا رہی ہے، شوگر مل کی مشینری نکال کر فروخت کر دی گئی ہے۔

وزیر قانون سلطان محمد خان نے کہا کہ اس معاملے پر ہائی کورٹ کا فیصلہ آ چکا ہے، 2016 سے سپریم کورٹ میں کیس زیر التوا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں