The news is by your side.

Advertisement

“اگر یہ حکمران بنے تو ہمیں یہاں سے ہجرت کرنی چاہیے”

بونیر: وزیراعلیٰ کے پی کا کہنا ہے کہ اگر اپوزیشن والے حکمران بن گئے تو ہمیں یہاں سے ہجرت کرنی چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق بونیر میں جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے محمود خان نے پیپلز پارٹی کو نشانے پر رکھتے ہوئے کہا کہ آپ لوگ کب تک بھٹو کے نام پر سیاست کرینگے، آپ لوگوں نے سندھ کو برباد کردیا ہے، یہ صرف سندھ کے لوگوں کو دھوکا دے رہےہیں۔

مریم نواز کو بھی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ یہ وہ نالائق ہیں جو انڈے کلو میں بیچتے ہیں، اگر یہ حکمران بنے تو ہمیں یہاں سے ہجرت کرناچاہیے۔جلسے سے خطاب میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے وزیراعلیٰ کےپی محمودخان نے کہا کہ بےشرم آدمی شہباز شریف نے پنجاب کا بیڑاغرق کردیا، سوات آپریشن کے وقت اس بےشرم نے اٹک کو بند کیا تھا، وہ بےشرم کہتا تھا یہ دہشتگرد ہیں انھیں پنجاب میں نہ آنےدو۔

پی ڈی ایم سربراہ سے متعلق محمودخان نے کہا کہ مولانا صاحب مدرسے کے بچوں کو پنڈال میں بٹھاتے ہیں اور خود محلوں میں رہتے ہیں۔

بونیر جلسے کے دوران وزیراعلیٰ کے پی لیگی رہنما امیر مقام پر بھی خوب برسے اور کہا کہ امیر مقام سوات میں آیا اس نے شانگلہ کو برباد کردیا، اب کہتا ہےکہ اب میں سوات میں حکمرانی کروں گا، امیرمقام سن لوں سوات کے لوگ آپ کا ساتھ نہیں دیں گے۔

وزیراعلیٰ کےپی محمودخان نے لیگی رہنما کو چور قرار دیتے ہوئے کہا کہ امیر مقام یاد رکھنا تم چور ڈاکو ہو، پی ٹی آئی میں تمہاری کوئی جگہ نہیں۔

جلسے سے خطاب میں محمود خان نے دعویٰ کیا کہ پچس جولائی کو آزاد کشمیر میں پی ٹی آئی کی حکومت بنے گی جبکہ دو ہزار تئیس میں انشااللہ پورے پاکستان میں پی ٹی آئی کی حکومت ہوگی، اپوزیشن والوں سن لو، وزیراعظم کےہوتےہوئے تم لوگ اقتدار میں نہیں آسکتے، ملک اب ترقی کی جانب بڑھ رہا ہے اور عوام وزیراعظم عمران خان کیساتھ کھڑی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں