The news is by your side.

Advertisement

خیبرپختونخواہ میں پولیو وائرس بے قابو، ہنگامی اقدامات کرنے کا فیصلہ

اسلام آباد / پشاور: وزیراعظم کے معاونِ خصوصی برائے انسداد پولیو مہم بابر بن عطا اور وزیراعلیٰ خیبرپختونخواہ محمود خان نے کے پی میں پولیو کے نئے کیسز رپورٹ ہونے کا نوٹس لیتے ہوئے ہنگامی اقدامات کرنے کا فیصلہ کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ خیبرپختونخواکاصوبےمیں پولیوکےنئےکیسزسامنےآنےپرنوٹس لیتے ہوئے اعلیٰ سطح کا اجلاس طلب کیا جس میں چیف سیکریٹری بھی شریک ہوئے۔

وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ پولیوکاخاتمہ حکومت کی اولین ترجیح ہے، تمام محکموں کو پولیو ٹیموں کے ساتھ مکمل تعاون کی ہدایت کی جائے اور ہر گھر تک رسائی دی جائے تاکہ پانچ سال سے کم عمر کوئی بھی بچہ قطرے پینے سے رہ نہ جائے۔

محمود خان نے اپیل کی کہ والدین پولیوکےخلاف پروپیگنڈے پرتوجہ نہ دیں،  پولیوکاعدم خاتمہ مختلف رکاوٹوں کاباعث بن سکتا ہے، جس کی وجہ سے پاکستان پر اقوام متحدہ سفری پابندیاں عائد کرسکتا ہے جو قومی وقار کے لیے نقصان دہ ہے۔ وزیراعلیٰ خیبرپختونخواہ نے تمام سیکریٹریز کو ہدایت کی کہ وہ پولیو کے حوالے سے والدین کے شکوک وشبہات اورتحفظات فوری دور کریں۔

مزید پڑھیں: پولیو وائرس بے قابو، ایک دن میں 2 نئے کیسز سامنےآ گئے

یہ بھی پڑھیں: پولیو مہم کا پہلا مرحلہ مکمل : ’’ڈپٹی کمشنرز نے انکاری والدین کو قائل کیا‘‘

بعد ازاں وزیراعظم کے معاون خصوصی نے وزیراعلیٰ خیبرپختونخواسےرابطہ کر کے صوبے میں رپورٹ ہونے والے نئے پولیو کیسز پر تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے مکمل تفصیلات حاصل کیں۔

بابر بن عطا کا کہنا تھا کہ طویل گفتگوکےبعدبڑےپیمانےپرہنگامی اقدامات کافیصلہ کیا گیا، پیرکووزیراعلیٰ خیبرپختونخواکی صدارت میں ہنگامی اجلاس طلب کیا گیا ہے جس میں آئندہ کا لائحہ عمل طے کیا جائے گا۔

اُن کا کہنا تھا عالمی ادارہ صحت وزیراعلیٰ کےپی کوپولیوصورتحال پربریفنگ دیں گے، چیف سیکریٹری،آئی جی اورتمام کمشنرزکی شرکت یقینی بنانےکی ہدایت کی گئی ہے، حکومت پولیو وائرس کے خاتمے تک سکون سے نہیں بیٹھے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں