The news is by your side.

Advertisement

کویت: غیر ملکیوں کے لیے بری خبر

کویت سٹی: کویت میں بھاری تنخواہیں وصول کرنے والے غیر ملکیوں کے لیے ورک پرمٹ جاری نہ کرنے کا منصوبہ زیر غور ہے۔

تفصیلات کے مطابق کویت کی وزرا کونسل کویتائزیشن پالیسی کے تحت کئی منصوبے زیر غور لا رہی ہے، ایک منصوبہ نجی شعبے میں بھاری تنخواہوں والے مناصب کا بھی ہے، جن پر کویتی شہریوں کو سرکاری شعبے کے ہم منصبوں کے برابر مالی فائدہ دیا جائے گا۔

روزنامہ الجریدہ کے مطابق حکومت ان تارکین وطن کے لیے ورک پرمٹ کے اجرا پر پابندی عائد کرنے کا بھی ارادہ رکھتی ہے جو بھاری تنخواہیں وصول کر رہے ہیں، تاکہ نجی شعبے میں کویتی شہری ان کی جگہ لے سکیں۔

پبلک اتھارٹی برائے افرادی قوت برائے قومی لیبر امور کے ڈپٹی ڈائریکٹر جنرل نے اس حوالے سے کہا کہ اگلے دو سالوں میں نجی شعبے میں شہریوں کے لیے 12 ہزار ملازمتیں پیدا کی جائیں گی۔

یاد رہے کہ دنیا بھر میں کرونا مرض پھیلنے کے بعد کویت سمیت تمام خلیجی ممالک میں سرکاری و پرائیویٹ سیکٹر میں مقامی شہریوں کی زیادہ سے زیادہ کھپت کا فیصلہ کیا گیا، جس کے تحت اب غیر ملکی کارکنان کی جگہ اپنے شہریوں کو نوکری دینے کو ترجیح دی جا رہی ہے۔

اس پالیسی کی وجہ سے خلیجی ممالک میں کام کرنے والے غیر ملکیوں کی ایک بڑی تعداد اپنی نوکریوں سے ہاتھ دھو بیٹھی ہے، اور یہ سلسلہ تاحال جاری ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں