The news is by your side.

Advertisement

لاہور کی یونیورسٹی میدان جنگ بن گئی، مظاہرین نے دروازے کو آگ لگادی

لاہور: پنجاب کے شہر لاہور اور فیصل آباد میں طلبا کا احتجاج پرتشدد ہوگیا، مشتعل مظاہرین نے یونیورسٹی کے دروازے کو آگ لگادی۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق لاہور میں مشتعل طلبا نے یونیورسٹی کے دروازے کو آگ لگادی، احتجاجی طلبا پر پولیس نے لاٹھی چارج کیا جس کے نتیجے میں دو طلبا زخمی ہوگئے جبکہ متعدد طلبا کو گرفتار کرلیا گیا، واضح رہے کہ طلبا مطالبہ کررہے ہیں کہ پڑھائی کی طرح امتحان بھی آن لائن لیے جائیں۔

ذرائع کے مطابق لاہور کی نجی جامعہ یونیورسٹی آف سینٹرل پنجاب کے طلبا نے آن لائن امتحانات کے لیے پرتشدد احتجاج کیا، مشتعل طلبا نے ٹائر جلائے اور انتظامیہ کے خلاف نعرے بازی کی۔

ادھر شوکت خانم روڈ پورا دن میدان جنگ بنا رہا، گارڈ اور طلبا نے ایک دوسرے پر پتھر، ڈنڈے اور لاٹھیاں برسائیں، پولیس نے طلبا کو منتشر کردیا۔

واضح رہے کہ وزیر تعلیم شفقت محمود کا کہنا تھا کہ آن لائن امتحانات کے حوالے سے فیصلہ یونیورسٹیز نے کرنا ہے، وی سیز دیکھیں اس سال مخصوص حالات میں ممکن ہے تو آن لائن امتحانات کرالیں۔

دوسری جانب معاون خصوصی برائے سیاسی روابط شہباز گل کا کہنا ہے کہ سوشل میڈیا پر لاہور میں طلبا کے احتجاج میں ایک ہلاکت کی افواہ چل رہی ہے، یہ جھوٹی افواہ ہے، انتظامیہ معاملے کو ذمہ داری سے دیکھ رہی ہے۔

شہباز گل کا کہنا تھا کہ طلبا اور اساتذہ ہمار اثاثہ ہیں دونوں کی حفاظت ہر صورت کی جائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں