بڑے ہدف کے باوجود قلندرز کو اسلام آباد کے ہاتھوں پھر شکست lahore qalanders
The news is by your side.

Advertisement

بڑے ہدف کے باوجود قلندرز کو اسلام آباد کے ہاتھوں پھر شکست

دبئی: پاکستان سپر لیگ کے تیسرے ایڈیشن کے اٹھارویں میچ میں بڑا ہدف بھی لاہور قلندرز کے کام نہ آسکا، اسلام آباد یونائیٹڈ نے لک رونچی کی عمدہ بیٹنگ کی بدولت میکولم الیون کو باآسانی 6 وکٹوں سے شکست دے دی۔

تفصیلات کے مطابق دبئی کے انٹرنیشنل کرکٹ اسٹیڈیم میں پاکستان سپرلیگ کا اٹھارواں میچ اسلام آباد یونائیٹڈ اور لاہور قلندرز کے مابین کھیلا گیا، قلندرز کی کپتانی میکولم جبکہ یونائیٹڈ کی قیادت مصباح الحق کررہے تھے۔

مصباح الحق نے  ٹاس جیت کر میکولم الیون کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی، قلندرز کی جانب سے اوپنگ کا آغاز فخر زمان اور اینٹون ڈیوچ نے کیا، لاہور اچھی اوپنگ ملی اور پہلی وکٹ 56 کے مجموعی اسکور پر اسکور گریں۔

بعد ازاں 101، 121، 149، 150، 162، 163 کے مجموعی اسکور پر گریں، اینٹون ڈیوچ 42 گیندوں پر 62 رنز کے ساتھ نمایاں بلے باز رہے علاوہ ازیں فخرزمان 34 اور میکولم 33 کے ساتھ دوسرے اور تیسرے نمایاں بیٹسمین رہے، اسلام آباد یونائیٹڈ کے باؤلر فہیم اشرف نے چار اوورز میں 32 رنز دے کر 3 وکٹیں حاصل کیں۔ قلندرز کی ٹیم نے مقررہ 20 اوورز میں 8 وکٹوں کے نقصان پر 163 رنز اسکور کیے اور اسلام آباد یونائیٹڈ کو جیت کے لیے 164 کا ہدف دیا۔

ہدف کے تعاقب میں اسلام آباد یونائیٹڈ نے بیٹنگ کا آغاز کیا تو جے پی ڈومینی اور لک رونچی نے کیا، 47 کے مجموعی اسکور پر ڈومینی پویلین لوٹے بعد ازاں شاداب خان نے اوپنر کے ساتھ شاندار بیٹنگ کرتے ہوئے ٹیم کو 87 رنز کی شراکت داری کے ذریعے مستحکم پوزیشن فراہم کی۔

مصباح الیون کی پہلی وکٹ 47، دوسری 134، 145 اور 151 کے مجموعی اسکور پر گری، رونچی 77 رنز کی ناقابل شکست اننگز کھیل کر نمایاں بلے باز رہے جبکہ شاداب خان 32 کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے، قلندرز کے باؤلر سنیل نارائن نے تین وکٹیں حاصل کیں۔

لک رونچی کو مین آف دی میچ کا ایوارڈ دیا گیا۔


اسلام آباد یونائیٹڈ اننگز خلاصہ

سنیل نارائن کے چوتھے اور اننگز کے سولہویں اوور کی پانچویں گیند پر لک رونچی 6 چھکوں اور پانچ چوکوں کے ساتھ 77 رنز کی شاندار اننگز کھیل کر پویلین لوٹے، بعد ازاں مصباح الحق اور صاحبزادہ فرحان نے 17.4 اوورز میں 4 وکٹوں کے نقصان پر ہدف حاصل کر کے ٹیم کو فتح دلوانے میں اہم کردار ادا کیا۔

بارہویں اوور کی آخری گیند پر شاداب خان 32 کے انفرادی اسکور پر پویلین لوٹے نئے آنے والے کھلاڑی آصف علی بھی 7 رنز پر پویلین لوٹے، پندرہویں اوور کے اختتام پر مصباح الیون نے تین وکٹوں کے نقصان پر مجموعی اسکور کو 149 تک پہنچایا۔

لک رونچی اور شاداب خان نے چھٹے اوور سے جارحانہ بیٹنگ کا آغاز کیا اور اگلے پانچ اوورز میں 67 رنز بنائے، دس اوورز کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور 1 وکٹ کے نقصان پر 115 تک پہنچا۔

ہدف کے تعاقب میں اسلام آباد یونائیٹڈ کی جانب سے بیٹنگ کا آغاز لک رونچی اور جے پی ڈومینی نے کیا تاہم 48 کے مجموعی اسکور پر اوپنر ڈومینی 21 رنز کے انفرادی اسکور پر آؤٹ ہوئے، 5 اوورز کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور 48 تک پہنچا۔

قلندرزاننگز خلاصہ

سولہویں اوور میں دنیش رام دین کلین بولڈ اور اینٹون ڈیوچ کیچ آؤٹ ہوئے، انیسویں اوور میں سنیل نارائن بھی پویلین لوٹے پھر اننگز کے آخری اوور میں لاہور قلندرز مخالف ٹیم کی دو وکٹیں حاصل کرنے میں کامیاب ہوئی۔

لاہور قلندرزکی ٹیم نے گیارہویں اوور میں مجموعی اسکور کی سنچری ایک وکٹ کے نقصان پر مکمل کی، بعد ازاں 12 اوورز میں شاداب خان نے آغاز سلمان کو پویلین کی راہ دکھائی۔

ساتویں اوور کی چوتھی گیند پر اوپنر فخر زمان 24 بالز پر 34 رنز کی اننگز کھیل کر آؤٹ ہوئے، نئے آنے والے کھلاڑی آغا سلمان نے ان ٹن ڈوچچ کا ساتھ دیتے ہوئے ٹیم کا مجموعی اسکور 10 اوور کے اختتام پر 94 تک پہنچایا۔

لاہور کی جانب کی جانب سے اوپنگ کا آغاز فخر زمان اور ڈیوسچ ان ٹن نے کیا، 5 اوورز کے اختتام پر ٹیم کا مجموعی اسکور بغیر کسی نقصان کے 47 تک پہنچا۔

قلندرز کی ٹیم مسلسل 5 مرتبہ شکست کا سامنا کرنے کے بعد اسلام آباد یونائیٹڈ کے خلاف میچ جیتنے کا عزم لیے میدان میں اتری ہے، پوائنٹس ٹیبل پر اسلام آباد یونائیٹڈ 6 پوائنٹس کے ساتھ چھٹے جبکہ لاہور قلندرز 0 صفر پوائنٹس کے ساتھ آخری نمبر پر موجود ہے۔

دونوں ٹیموں نے اب تک 5، 5 میچز کھیلے ہیں جن میں سے لاہور قلندرز ایک میں بھی فتح حاصل نہ کرسکی۔ دوسری جانب اسلام آباد یونائیٹڈ 3 میچز میں فتح جبکہ 2 میچز میں شکست کھا چکی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں