The news is by your side.

Advertisement

دوبچیوں کے اغوا کاکیس، یہ بات ذہن نشین کر لیں کہ ہمیں بچیاں ہر حال میں چاہییں، جسٹس شوکت صدیقی

اسلام آباد : دو بچیوں کے اغوا کے کیس میں جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے کہا کہ یہ بات ذہن نشین کر لیں کہ ہمیں بچیاں ہر حال میں چاہییں، سمجھ لیں دونوں بچیاں میری اپنی بیٹیاں ہیں۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ میں جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے ڈیڑھ سال سے لاپتہ دوبچیوں سمعیہ اور ادیبہ کی بازیابی کے لیے دائر درخواست پر سماعت کی ، سیکرٹری داخلہ ذاتی حیثیت میں عدالت میں پیش ہوئے جبکہ ایس ایس پی ساجد کیانی ،ڈپٹی اٹارنی جنرل ارشد محمود کیانی عدالت میں پیش ہوئے۔

جسٹس شوکت عزیز نے اپنے ریمارکس میں کہا کہ افسوس اسلام آبادپولیس بچیوں کوبازیاب نہ کرا سکی۔

جس پر پولیس حکام نے عدالت کو بتایا کہ پولیس کوشش کررہی ہے،جلدبچیاں بازیاب ہوں گی۔

جسٹس شوکت عزیز نے ریمارکس میں کہاکہ پولیس کی کوششوں میں وہ تڑپ نظر نہیں آ رہی، ذہن نشین کرلیں بچیاں ہر حال میں چاہئیں،سمجھ لیں دونوں بچیاں میری اپنی بیٹیاں ہیں۔

ڈپٹی اٹارنی جنرل نے عدالت کوبتایاکہ بچیاں ہماری بھی بیٹیاں ہیں۔

بعد ازاں اسلام آباد ہائیکورٹ نے کیس کی سماعت 31 جنوری تک ملتوی کردی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں