The news is by your side.

Advertisement

تعلیمی ادارے 18جنوری کوکھولنے کا حکومتی فیصلہ، این سی اوسی کے فیصلےکی تفصیلات طلب

لاہور : لاہور ہائی کورٹ نے 18 جنوری کو تعلیمی ادارےکھولنے کے حکومتی فیصلہ کے خلاف درخواست پر این سی او سی کے فیصلے کی تفصیلات طلب کرلیں۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ کے روبرو مقامی وکیل فیصل جی میراں کی 18 جنوری کو تعلیمی ادارے کھولنے کے حکومتی فیصلہ کے خلاف درخواست پر سماعت ہوئی۔

درخواست گزار نے کہا کہ گزشتہ لہر میں 3 ہزار مریض روزانہ کی بنیاد پر سامنے آرہے تھے اور یہ لہر پہلی لہر سے زیادہ خطرناک ہے، اس سے بچوں کی زندگیوں کو خطرہ لاحق ہے،

عدالت نے قرار دیا کہ حکومت سنجیدہ نظر آرہی ہے اور آج اس پالیسی سے متعلق اعلان متوقع ہے، حکومتی سنجیدگی کے باوجود یہ درخواست کیسے قابل سماعت ہے۔

درخواست گزار وکیل نے بتایا کہ حکومت کی ابھی تک کوئی واضح پالیسی نہیں آئی، عدالت نے سرکاری وکیل سے استفسار کیا کہ اب سکول کھولنے کا اعلان کیوں کیا گیا ہے کیا اب مریضوں کی تعداد کم آ رہی ہے، حکومت نے طلبہ کی حفاظت کے لیے کیا اقدامات کیے ۔

سرکاری وکیل نے کہا کہ این سی او سی کے فیصلہ کے مطابق اسکول کھولے جاٸیں گے اس حوالے سے وزیراعظم کی سربراہی میں کابینہ کا اجلاس ہوا۔

پنجاب حکومت کے وکیل نے بتایا کہ اسکول حکومتی ہدایت پرعمل نہیں کریں گے تو بندکردیےجائیں گے،بین الاقوامی اصول اپنانےکےلیےاقدامات کیےجارہےہیں ، جس پر عدالت نے کہا تعلیم کی اہمیت ہےمگرزندہ رہیں گےتوپڑھیں گے۔

عدالت نے این سی اوسی کے فیصلے کی تفصیلات طلب کرتے ہوئے درخواست پر کارروائی 19 جنوری تک ملتوی کر دی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں