The news is by your side.

Advertisement

لاہور ہائی کورٹ نے نیب کو رانا مشہود کے خلاف تادیبی کارروائی سے روک دیا

لاہور : لاہور ہائی کورٹ نے نیب کو رانا مشہود کے خلاف تادیبی کارروائی سے روک دیا، عدالت نے نام بلیک لسٹ میں شامل کیے جانے پر وزارت داخلہ سے بھی جواب طلب کرلیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ میں جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے رانا مشہود کی نیب نوٹسز کے خلاف درخواست پر سماعت کی۔

وکیل رانا مشہود نے مؤقف اختیار کیا کہ انہیں یوتھ فیسٹول کے حوالے سے انکوائری میں نوٹس جاری کیا گیا، نیب نے الزام لگایا کہ یوتھ فیسٹول میں بدعنوانی اور غیر قانونی ٹھیکے دیے گئے۔ تاہم یوتھ فیسٹول کے حوالے سے نیب پہلے انکوائری ختم کرچکا ہے۔

وکیل کا کہنا تھا انکوائری بند کرنے کے بعد دوبارہ کیوں کھولی گئی؟ اگر کوئی نئے شواہد ملے ہیں تو ہم شامل تفتیش ہونے کے لیے تیار ہیں۔

عدالت نے استفسار کیا کہ کیا عثمان انور اس میں شریک ملزم اور گرفتار ہیں؟ وکیل رانا مشہود کے مطابق عثمان انور پیپرا رولز کی خلاف ورزی کے الزام میں گرفتار ہیں۔

عدالت نے رانا مشہود کی درخواست پر سماعت 24 جولائی تک ملتوی کردی۔

سماعت کے بعد میڈیا سے گفتگو میں رانا مشہود کا کہنا تھا کہ نیب کی جانب سے بلیک لسٹ میں نام ڈالنا غیر قانونی ہے، ہائی کورٹ میں ضمانت کے لیے نہیں آیا، نیب کا سامنا کروں گا۔ اگر یہ سمجھتے ہیں نیب اور اے این ایف سے ہماری آواز دبا دیں گے تو ایسا ممکن نہیں۔

مزید پڑھیں : بیرون ملک فرار ہونے کی کوشش، نیب نے رانا مشہود کو 8 جولائی کو طلب کرلیا

یاد رہے 3 روز قبل ایف آئی اے امیگریشن نے سابق صوبائی وزیر رانا مشہود کی بیرون ملک فرار ہونے کی کوشش ناکام بنادی تھی اور امریکہ جانے والی پرواز 621 قطر ایئر ویز سے آف لوڈ کردیا تھا۔

بعد ازاں نیب لاہور نے پنجاب سپورٹس فیسٹیول تحقیقات میں مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق وزیر تعلیم رانا مشہود کو 8 جولائی کو طلب کر لیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں