The news is by your side.

Advertisement

کرکٹر شرجیل خان کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم

لاہور : لاہور ہائی کورٹ نے وزارت داخلہ کو کرکٹر شرجیل خان کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم دیتے ہوئے سات دن میں عمل درآمد کی ہدایت کردی۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس ساجد محمود سیٹھی نے کرکٹر شرجیل خان کی درخواست پر سماعت کی، کرکٹر شرجیل خان کے وکیل شیغان اعجاز نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ شرجیل خان کا اسپاٹ فکسنگ اور میچ فکسنگ سے کوئی تعلق نہیں رہا، وفاقی حکومت نے ان کا نام ای سی ایل میں شامل کر رکھا ہے‌‌۔

وکیل کا کہنا تھا کہ شرجیل خان کو عمرے کی ادائیگی کیلئے سعودی عرب جانا چاہتے ہیں،استدعا ہے کہ عدالت شرجیل خان کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم دے۔

وزارت داخلہ کے وکیل نے کہا کہ ایف آئی اے کے پاس انکوائری زیرالتواء ہے، شرجیل خان کا نام ایف آئی اے کے کہنے پر ای سی ایل میں ڈالا گیا، جس پر عدالت نے وزارت داخلہ کو کرکٹر شرجیل خان کا نام ای سی ایل سے نکالنے کا حکم دے دیا اور سات دن میں عمل درآمد کی ہدایت کرتے ہوئے درخواست نمٹا دی۔

مزید پڑھیں : سزا بھگتنے کے بعد کرکٹر شرجیل خان نے اسپاٹ فکسنگ پر معافی مانگ لی

خیال رہے کہ کرکٹر شرجیل خان پر پی ایس ایل ٹو میں فکسنگ کا یہ الزام تھا کہ انہوں نے میچ میں رقم کے عوض دو ڈاٹ بالز کھیلیں۔ شرجیل خان پر پاکستان کرکٹ بورڈ کوڈ کی پانچ شقوں کی خلاف ورزی کا الزام تھا جس کے بعد ان پر پانچ سال کی پابندی عائد کی گئی۔

بعد ازاں کرکٹر شرجیل خان نے اسپاٹ فکسنگ پر معافی مانگتے ہوئے کہا تھا کہ یقین دلاتا ہوں مستقبل میں ذمہ داری کا مظاہرہ کروں گا، قوائد کی خلاف ورزی وقتی فائدہ دیتی ہے مگر نتائج کیریئر پر اثرانداز ہوتے ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں