لاہور ہائیکورٹ نے نئے علاقائی بنچز کے قیام کا مطالبہ مسترد کر دیا -
The news is by your side.

Advertisement

لاہور ہائیکورٹ نے نئے علاقائی بنچز کے قیام کا مطالبہ مسترد کر دیا

لاہور: ہائیکورٹ کے چیف جسٹس کی سربراہی میں عدالت عالیہ کے تمام ججز پر مشتمل فل کورٹ نے نئے علاقائی بنچز کے قیام کا مطالبہ مسترد کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس سید منصور علی شاہ کی سربراہی میں فل کورٹ اجلاس 15 سے 17 جولائی تک تین روز تک جاری رہا، اجلاس میں عدالت عالیہ لاہور کے تمام 47 ججز شریک ہوئے، اجلاس میں ہائی کورٹ کے نئے علاقائی بنچز کے قیام اور ججز کی تعداد بڑھانے سے متعلق امور پر تفصیلی غوروخوض کر کے نئے بنچز کے قیام کے حوالے سے فیصلہ محفوظ کیا گیا ۔

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ کی جانب سے فل کورٹ اجلاس کا فیصلہ جاری کرتے ہوئے عدالت عالیہ کے نئے علاقائی بنچز کے قیام کا مطالبہ مسترد کر دیا گیا ہے تاہم ججز کی تعداد بڑھانے کے حوالے سے فیصلہ کچھ عرصے کے لیے موخر کر دیا گیا ہے، نئے علاقائی بنچز نہ بنانے سے متعلق سمری بھی گورنر ہاوس کو ارسال کر دی گئی ہے ۔

لاہور ہائی کورٹ کے نئے علاقائی بنچز بنانے کے لیے گوجرانوالہ،فیصل آباد،سرگودھا ، ساہیوال اور ڈی جی خان اضلاع کے وکلاءنے تحریک بھی شروع کر رکھی ہے جس میں عدالتی بائیکاٹ بھی کیا جا رہا ہے جبکہ لاہور ہائی کورٹ کو گورنر پنجاب کی جانب سے بھی 2013 میں نئے علاقائی بنچز کے قیام کے لیے خط لکھا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں