The news is by your side.

مہسا امینی احتجاج: ایرانی پاسداران انقلاب کے سینئر کمانڈر سمیت 19 ہلاک

تہران: ایران میں پولیس کی حراست میں مہسا امینی کے قتل کے بعد شروع ہونے والے پُر تشدد ہنگاموں میں مزید انیس افراد ہلاک ہو گئے۔

ایرانی میڈیا کے مطابق گزشتہ روز جنوب مشرقی شہر زاہدان میں جھڑپوں کے دوران ایرانی پاسداران انقلاب کے سینئر کمانڈر سمیت 19 افراد ہلاک ہو گئے۔

ایران میں پولیس کی زیر حراست 22 سالہ خاتون مہسا امینی کے قتل پر احتجاج کا سلسلہ گزشتہ 3 ہفتوں سے جاری ہے، جس میں ہلاکتوں کی تعداد 83 ہو گئی ہے۔

زاہدان کے گورنر کا کہنا ہے کہ مظاہروں کے دوران اسلامی انقلابی گارڈز کور کے صوبائی انٹیلی جنس افسر کرنل علی موسوی بھی جان سے گئے۔

ایرانی صدر ابراہیم رئیسی نے خبردار کیا ہے کہ کسی کو بھی قانون شکنی اور افراتفری پھیلانے کی اجازت نہیں ہے۔

مہسا امینی قتل کے خلاف تہران اور اصفہان سمیت مختلف شہروں میں احتجاجی مظاہرے بدستور جاری ہیں، جب کہ مشہد میں رات گئے مظاہرین اور سیکیورٹی فورسز کے درمیان جھڑپیں ہوئیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں