تازہ ترین

کوئٹہ: تفتان جانیوالی بس سے اغوا کیے گئے 9 مسافر قتل

کوئٹہ:نوشکی کے قریب تفتان جانیوالی بس سے اغوا کیے...

بہاولنگر واقعے کی مشترکہ تحقیقات ہوں گی، آئی ایس پی آر

آئی ایس پی آر نے کہا ہے کہ بہاولنگر...

عیدالفطر پر وفاقی حکومت نے عوام کو خوشخبری سنا دی

اسلام آباد: عیدالفطر کے موقع پر وفاقی حکومت نے...

ایشیائی بینک نے پاکستان میں مہنگائی میں کمی کی پیشگوئی کر دی

ایشیائی ترقیاتی بینک نے پاکستان میں آئندہ مالی سال...

سنگدل شخص نے بیوی اور 7 بچوں کو قتل کر دیا

پنجاب کے علاقے مظفر گڑھ میں اجتماعی قتل کا...

بہو کی پُراسرار موت پر ساس اور سسر کو زندہ جلا دیا گیا

بھارت کی ریاست اتر پردیش میں افسوسناک واقعہ پیش آیا جہاں بہو کی پُراسرار موت کے بعد مقتولہ کے والدین نے اس کی ساس اور سسر کو زندہ جلا کر موت کے گھاٹ اتار دیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق شہر سنگم میں انشیکا نامی لڑکی کی سسرال میں پُراسرار موت کے بعد اس کے والدین طیش میں آگئے۔ ملزمان نے بیٹی کے سسرال پہنچ کر تمام دروازوں کو باہر سے بند کیا اور پورے گھر کو آگ لگا دی۔

گھر میں آگ لگنے کی اطلاع پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر فائر بریگیڈ کی ٹیم کو طلب کیا تھا جس نے گھر کے اندر سے پانچ افراد کو زخمی حالت میں زندہ نکال کر اسپتال منتقل کیا۔

آگ بجھنے کے بعد جب پولیس گھر کے اندر داخل ہوئی تھی تو مقتولہ کی ساس اور سسر کی لاشیں ملی۔

انشیکا کی شادی انشو نامی لڑکے سے گزشتہ سال فروری میں ہوئی تھی۔

واقعے سے قبل انشیکا کے والدین کی شکایت پر پولیس نے انشو کے اہل خانہ کے خلاف مقدمہ درج کر کے قانونی کارروائی شروع کی تھی۔ انشیکا کے والدین نے یہ الزام عائد کیا تھا کہ سسرال میں ان کی بیٹی سے جہیز کا مطالبہ کیا جاتا ہے۔

پیر کی شام انشو کے والدین نے انشیکا کے گھر والوں فون کر کے بتایا کہ ان کی بیٹی نے دوپہر 3 بجے سے خود کو ایک کمرے میں بند کر لیا اور دروازہ نہیں کھول رہی۔

انشیکا کے والدین نے اس کے سسرال پہنچ کر دروازہ توڑا تو اندر سے اس کی لاش برآمد ہوئی۔ اس پر انشیکا کے والدین طیش میں آ گئے۔ ملزمان نے بیٹی کو قتل کرنے کا الزام عائد کرتے ہوئے گھر کو آگ لگا دی اور انشیکا کی لاش لے کر فرار ہوگئے۔

ملزمان نے گھر میں 7 افراد کو بند کیا اور آگ لگائی جس سے مقتولہ کے ساس اور سسر جھلس کر ہلاک ہوئے۔ پولیس اب تک ملزمان کو گرفتار نہیں کر سکی۔

Comments

- Advertisement -