maryumفرد جرم عائد ہونے کی ‌خبر سے مجھے1999کا ڈکٹیٹر شپ کا دور یاد آیا،مریم نواز
The news is by your side.

Advertisement

فرد جرم عائد ہونے کی ‌خبر سے مجھے1999کا ڈکٹیٹر شپ کا دور یاد آیا،مریم نوازکا ٹوئٹ

لاہور : سابق وزیراعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز کا کہنا ہے کہ نواز شریف پر فرد جرم عائد ہونے کی خبر سے مجھے 1999کا ڈکٹیٹر شپ کا دور یاد آیا۔

تفصیلات کے مطابق سابق وزیراعظم نوازشریف پر تیسرے ریفرنس میں بھی فرد جرم عائد ہونے پر مریم نواز نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ خبر سے مجھے انیس سو ننانوے کے ڈکٹیٹرشپ کا دور یادآیا۔

مریم نواز نے کا کہ انیس سو ننانوے میں والدہ کیساتھ پشاور میں ڈکٹیٹر کیخلاف جلسے میں شریک تھی،اس وقت بھی فردجرم عائد کرنے جیسی ہی خبر آئی تھی۔

اس سے قبل ٹوئٹ میں نواز شریف کی صاحبزادی کا کہنا تھا کہ انصاف ترچھاہوگیا، لوگ سب جانتے ہیں۔


مزید پڑھیں :  انصاف کاتماشہ نہ بنائیں، سزاسنانی ہے تو سنادیں ،روز روز کی پیشیاں نہ کریں، مریم نواز


،یاد رہے گذشتہ روز  احتساب عدالت نے ایون فیلڈ ریفرنس میں نااہل نوازشریف، مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر پر فرد جرم عائد کی تھی ، تاہم مریم نواز اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر نے صحت جرم سے انکار کیا تھا۔

فرد جرم عائد ہونے کے بعد مریم نواز نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ  انصاف کاتماشہ نہ بنائیں، سزاسنانی ہے تو سنا دیں ، روز روز کی پیشیاں نہ کریں، احتساب کوانتقام بنانے والوں کا بھی احتساب ہوگا۔

مریم نواز کا کہنا تھا کہ والدہ کالندن میں علاج ہورہاہے، ہم قانون اور عدالتوں کے احترام میں وطن واپس آئے، صبر،امید اور حوصلے کے ساتھ ٹرائل کاسامنا کررہے ہیں، 1999میں عدالتوں کا سامنا کیا تھا، یہ سب نیا نہیں، دوبارہ ٹیلی کاسٹ ہورہا ہے، ایک خاندان کے ٹرائل کوتماشا نہ بنایا جائے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئرکریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں