The news is by your side.

Advertisement

سیف بن زاید النہیان سمیت 4 اراکین کابینہ وزارت امکانات کیلئے نامزد

دبئی : متحدہ عرب امارات کے وزیر اعظم محمد بن راشد المکتوم نے چار کابینہ اراکین کو نئی وزارت امکانات کی ذمہ داری سونپ دی۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ عرب امارات کے نائب صدر و وزیر اعظم اور دبئی کے حکمران شیخ محمد بن راشد المکتوم کی جانب سے دبئی میں ایک غیر روایتی وزارت تشکیل دی گئی ہے جس کا نام ’اللامستحیل’ ہے یعنی ’وزارت امکانات‘ ہے۔

اماراتی خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ شیخ محمد کے حکم پر متحدہ عرب امارات کے ڈپٹی وزیر اعظم و وزیر داخلہ لیفٹیننٹ جنرل شیخ سیف بن زاید النہیان کو محکمہ برائے انعامات، مالی امور کے وزیر عبید حمید التائر کو محکمہ برائے فراہمی اسباب جبکہ وریر برائے ثقافت و ترقی نورا محمد الکابی کو محکمہ برائے یو اے ای صلاحیت کے ساتھ ملکر وزارت امکانات میں کام کرنے کی ذمہ سونپی گئی ہے۔

شیخ محمد بن راشد المتکوم نے وزیرِ خوشی و بہتر زندگی اُحد خلیفہ الرومی کو محمکہ توقعات کے ساتھ ملکر وزارت امکانات میں خدمات انجام دینے کی ذمہ داری دی گئی ہے۔

شیخ محمد کا کہنا تھا کہ ’ہمیں ایسی ٹیم چاہیے جو ناقابل یقین نتائج حاصل کرے اور ریکارڈ وقت میں وزارت امکانات کے مقاصد مکمل ہوں، آج ہم چیلنجز کے نئے دور میں ہیں ہمارے پاس قیمتی وقت نہیں ہے کہ مسائل پر ایسے ہی وقت گزار دیں‘۔

رپورٹ کے مطابق نئی وزارت کا کوئی وزیر مقرر نہیں ہے تاہم کابینہ کے اراکین کو ایک ایک محکمے کے ساتھ وزارت امکانات میں کام کرنے کی ذمہ داری دی گئی ہے، وزارت امکانات مستقبل کے امکانات کا جائزہ لے گی۔

یاد رہے کہ دبئی کے حاکم شیخ محمد بن راشد المکتوم منے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ جکے ذریعے وزارت امکانات کا اعلان کیا تھا، ان کا کہنا تھا کہ امارات کی حکومت کے تحت ایک نئی اور غیرروایتی وزارت کے قیام کا فیصلہ کیا ہے، ہم نے اس کا نام وزارت امکانات رکھا ہے۔

مزیدپڑھیں : دبئی میں ’کچھ بھی ناممکن نہیں‘ کے نام سے نئی وزارت کے قیام کا اعلان

انہوں نے لکھا تھا کہ ہماری ڈکشنری میں ناممکن کا لفظ نہیں، ہم ناممکنات کو ممکن بنائیں گے اسی لیے وزارت کا نام ہی کچھ بھی ناممکن نہیں رکھا ہے۔

قبل ازیں امارت اس طرح کی غیر روایتی وزارتوں کے قیام کا فیصلہ کیا تھا ان میں سے ایک وزارت خوشی بھی ہے، اسی طرح وزازرت رواداری اور وزارت نوجوانان کا بھی اعلان کیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں