The news is by your side.

Advertisement

“مچھلی کا ڈپریشن کیسے دور کیا جائے”

فن لینڈ : فن لینڈ کے مچھلی گھر میں میکو نامی ایک خونخوار مچھلی کی سولہویں سالگرہ منائی گئی۔

میکو کا تعلق گروپر قسم کی مچھلیوں سے ہے، جنہیں بہت خطرناک اور خونخوار سمجھا جاتا ہے کیونکہ یہ صرف اپنے سے چھوٹی مچھلیوں ہی کو نہیں کھاتیں بلکہ اپنے سے بڑی جسامت والی مچھلیوں تک پر حملہ کرکے ان کی کھال اُدھیڑ دیتی ہیں۔

اس طرح کے واقعات ریکارڈ پر ہیں جب گروپر مچھلیوں نے شارک کو گھیر کر مار ڈالا اور پھر سب مل کر اس کا گوشت کھا گئیں۔

پینتیس پونڈ وزنی میکو بھی خونخوار ہے، جو کچھ روز پہلے ہی پورے سولہ سال کی ہوئی ہے، اسے فن لینڈ کے سی لائف ہیلسنکی نامی تفریحی مقام کے ایک مچھلی گھر میں اکیلا رکھا گیا ہے۔ڈپریشن کی وجہ سے میکو نامی اس گروپر مچھلی نے تیرنا چھوڑ دیا تھا اور اس سے کہیں زیادہ نہیں ہے۔ (فوٹو: سی لائف ہیلنسکی)

مچھلی گھر کے ملازمین ایک نرم برش سے میکو کا جسم سہلا کر اسے خوش رکھتے ہیں، یہی نہیں انہوں نے اس کے ایکویریئم کے قریب ہی کھانا پینا شروع کردیا ہے، ان تمام کوششوں کا مقصد میکو کا احساسِ تنہائی اور ڈپریشن دور کرنا تھا، جس میں انہیں خاصی کامیابی حاصل ہوئی ہے۔

مچھلی گھر انتظامیہ کے مطابق میکو کی سال گرہ منانے کا مقصد اس کا ڈپریشن اور احساسِ تنہائی دُور کرنا ہے، کیونکہ کرونا وبا کی وجہ سے عوام کے لیے یہ تفریحی مقام بند کردیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں