site
stats
پاکستان

فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع کا بل آج ایوان میں پیش کیا جائے گا

اسلام آاباد : فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع کیلئے اٹھائیسویں آئینی ترمیم کا بل آج قومی اسمبلی میں پیش کیا جائے گا۔

تفصیلات کے مطابق قومی اسمبلی کا اجلاس اسپیکر ایاز صادق کی زیر صدارت آج شام چار بجے ہوگا، اجلاس میں فوجی عدالتوں کی مدت میں توسیع کیلئے ترامیم کا بل آج ایوان میں پیش کی جائے گا، بل پر ایوان میں بحث آج ہوگی اور پارلیمانی کمیٹی کیلیے قرارداد بھی آج ہی پیش ہوگی ۔

فوجی عدالتوں کے بل پر ووٹنگ منگل کو ہوگی اور ن لیگ کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس بھی منگل کو ہوگا۔

خیال رہے کہ پیپلز پارٹی نے حکومت کے مجوزہ بل کی مخالفت کی تھی، مگر جامع اور تفصیلی ملاقاتوں کے بعد اتفاق رائے پیدا کرنے کی غرض سے پی پی پی نے اپنی 2 اہم شرائط واپس لے لی تھیں، جس کے بعد حکومت اور حزب اختلاف نے 16 مارچ کو فوجی عدالتوں کی مدت میں 2 سالہ توسیع پر اتفاق کرلیا تھا۔

ایاز صادق کا کہنا تھا کہ فوجی عدالتوں کے معاملے پر ڈیڑھ ماہ تک مشاورت کا عمل جاری رہا اور تمام جماعتیں متفق ہوگئیں، قومی اسمبلی میں قانونی مسودے کی منظوری دی جائے گی اور نیشنل سیکیورٹی پر پارلیمانی لیڈرز کی کمیٹی بھی تشکیل دی جائے گی۔


مزید پڑھیں : فوجی عدالتوں میں‌ توسیع، ایوان میں رائے شماری ہوگی، اسحاق ڈار


گذشتہ روز اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے اسحاق ڈار نے کہا تھا کہ پارلیمانی رہنماؤں کے اتفاق رائے کے بعد فوجی عدالتوں کے بل میں ترمیم کر کے اُسے کل ایوان میں پیش کیا جائے گا اور اس پر بحث بھی کی جائے گی۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ پارلیمانی رہنماؤں کے اجلاس میں قومی سلامتی کے بارے میں پارلیمانی کمیٹی کی تشکیل پر اتفاق کیا گیا، قومی اسمبلی اور سینیٹ کے پارلیمانی رہنما کمیٹی کے ارکان ہوں گے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top