The news is by your side.

Advertisement

مودی سرکار کیخلاف منی لانڈرنگ کا تہلکہ خیز اسکینڈل منظر عام پر آگیا

نئی دہلی : بھارت میں حزب اختلاف کی جماعت کانگریس مودی سرکار کے خلاف منی لانڈرنگ کا تہلکہ خیز اسکینڈل منظر عام پر لے آئی، نوٹ بندی کوبھارتی تاریخ کا سب سے بڑااسکینڈل قرار دیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق انتخابات کے دوران مودی سرکار کا مالیاتی اسکینڈل سامنے آگیا، میڈیا سے گفتگو میں کانگریس کے رہنما کپیل سبل نےمودی سرکار پر ہندوستان کی تاریخ کے سب سے بڑے نوٹ بندی اسکینڈل کا الزام عائد کردیا۔

مودی سر کار نے اپنے دوراقتدار میں را لوگوں کے ساتھ ملکر منی لانڈرنگ کی

کانگریس کے رہنما نے کہا مودی سر کار نے اپنے دوراقتدار میں را لوگوں کے ساتھ ملکر منی لانڈرنگ کی ، مودی سر کار نے اپنے دوراقتدار میں را لوگوں کےساتھ ملکر منی لانڈرنگ کی اور ایجنسیوں کو اپنے مخالفین کے خلاف استعمال کیا۔

کپیل سبل کا کہنا تھا اربوں روپے کی کرنسی بیرون ملک چھاپی گئی اور انہیں بھارتی فضائیہ کے خصوصی طیاروں سےاندرون ملک لایاگیا اور ایکسچینج ریٹ میں بھی ہیرپھیرکی گئی۔

 اربوں روپے کی کرنسی بیرون ملک چھاپی گئی اور انہیں بھارتی فضائیہ کے خصوصی طیاروں ملک میں لایا  گیا

انھوں نے مزید کہا اس سب کام کے لیے لاجسٹکس سپورٹ بی جی پے کہ صدرامیت شاہ اور اس کا بیٹا فراہم کیا کرتا تھا جبکہ امیت شاہ پر کئےگئے اسٹنگ آپریشن کی ویڈیو منظرعام پرآگئی۔

رہنما نے پی جی پی کی منی لانڈرنگ کے شواہد کی ویڈیو بھی انہوں نے میڈیا کے سامنے پیش کی۔

کانگریس کا کہنا ہے جب چوری ہورہی تھی اورچوکیدار سورہا تھا، لگتا ہے چور اور چوکیدار ملے ہوئے ہیں ، مرکزی بینک کے ذریعے چلائی گئی مہم میں کروڑوں روپے کا کالا دھن سفید کروایا گیا، جس سے مودی سرکار نے خوب کمیشن کمایا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں